پولیس حراست میں نوجوان پر بدترین تشدد، بیلف کا چھاپہ

پولیس حراست میں نوجوان پر بدترین تشدد، بیلف کا چھاپہ

  

کوٹ ادو(تحصیل رپورٹر)پولیس حراست میں کم سن نوجوان پر بدترین جسمانی تشدد، والد فریاد لے کر عدالت میں جاپہنچا، عدالتی بیلف کا تھانہ سٹی کوٹ ادو میں چھاپہ غیر قانونی طور پر محبوس نوجوان برآمد کرلیا  تفصیلات کے مطابق عبدالعزیز نے   محمود حیات ایڈیشنل سیشن جج کوٹ ادو کو درخواست دی کہ پولیس تھانہ کوٹ ادو نے میرے بیٹے کاشف عزیز کو پولیس تھانہ کوٹ نے بغیر کسی مقدمہ کے حراست میں لیا ہوا ہے۔ تھانہ سٹی کوٹ ادو کے ایس ایچ او مجتبی کی ایما پر میرے کم سن بیٹے پر شدید جسمانی تشدد کیا جار ہے جس پر عدالت نے فوری طور پر کاروائی کرتے ہوئے۔ ریڈر حافظ محمد عبدالقدیر کو بطور بیلف مقرر کرکے تھانہ سٹی کوٹ ادو بھیجا۔ عدالتی بیلف نے ریکارڈ چیک کیا اور مبینہ محبوس کاشف عزیز کو برآمد کرکے عدالت میں پیش کیا۔جس پر عدالت نے ریکارڈ میں نام نہ ہونے کی بنا پر فوری طور پر کاشف عزیز کی ہتھکڑیاں کھلوا کر آزاد کردیا اور پولیس کے خلاف قانونی کاروائی کا حکم دے دیا۔مضروب نوجوان کو علاج معالجے کیلئے تحصیل ہیڈ کوارٹر ہسپتال کوٹ کے منتقل کر دیا گیا۔

مزید :

ملتان صفحہ آخر -