اپنی قابل اعتراض تصاویر اور ویڈیوز پوسٹ کرکے لاکھوں ڈالر کمانے والی ماڈل کی چوری بالآخر پکڑی گئی

اپنی قابل اعتراض تصاویر اور ویڈیوز پوسٹ کرکے لاکھوں ڈالر کمانے والی ماڈل کی ...
اپنی قابل اعتراض تصاویر اور ویڈیوز پوسٹ کرکے لاکھوں ڈالر کمانے والی ماڈل کی چوری بالآخر پکڑی گئی
سورس: Instagram

  

لندن(مانیٹرنگ ڈیسک) فیملی اور دوستوں سے چوری بالغوں کی ویب سائٹ ’اونلی فینز‘ پر اپنی قابل اعتراض تصاویر اور ویڈیوز پوسٹ کرکے لاکھوں ڈالر کمانے والی ماڈل کی چوری بالآخر پکڑی گئی۔

ڈیلی سٹار کے مطابق یاسمین بیکر نامی یہ ماڈل برطانوی علاقے نورفوک کی رہائشی تھی۔ وہ ریٹیل کمپنی ’ٹیسکو‘ میں ملازمت کرتی تھی۔ وہ اس وقت اونلی فینز پر شرمناک ماڈلنگ کی طرف راغب ہوئی جب اس کے سابق بوائے فرینڈ نے اسے مقروض حالت میں چھوڑ دیا۔

رپورٹ کے مطابق اونلی فینز پر یاسمین بیکر کا اکاﺅنٹ تیزی سے مقبول ہوا اور وہ ماہانہ 70ہزار پاﺅنڈ تک کمانے لگی۔ تاہم اسے ڈر تھا کہ اس کے اس پیشے سے متعلق اس کے گھر والوں اور دوستوں کو علم نہ ہو جائے، چنانچہ وہ برطانیہ چھوڑ کر وسطی امریکہ کے ملک پانامہ چلی گئی اور وہاں لگژری زندگی جینے لگی۔ 

28سالہ یاسمین بیکر کا کہنا ہے کہ اس کے اونلی فینز اکاﺅنٹ کو ایک فیملی فرینڈ نے سبسکرائب کر لیا اور اس کی تصاویر وہاں سے چوری کرکے اس کے آبائی شہر میں وائرل کر دیں۔ یاسمین نے کہا کہ ”اتنے سال تک میں نے اپنا یہ پیشہ چھپا کر رکھا تھا لیکن اس فیملی فرینڈ کی وجہ سے سب لوگ اس کے متعلق جاننے لگے ہیں۔ “

یاسمین نے بتایا کہ ”کورونا وائرس کی وباءکے دنوں میں اونلی فینز سے میں ماہانہ 70ہزار پاﺅنڈ تک کماتی رہی ہوں۔ اب میری آمدنی کم ہو کر ماہانہ اوسطاً 25پاﺅنڈ رہ گئی ہے۔ میں نے قرض چکانے کے لیے یہ پلیٹ فارم جوائن کیا تھا مگر میرا اکاﺅنٹ میری توقع سے کہیں بڑھ کر مقبول ہوا اور آج میں ایک پرتعیش زندگی گزار رہی ہوں۔“

مزید :

ڈیلی بائیٹس -تفریح -