شہباز تتلا قتل کیس، اعتراضات دور کرنے کے بعد چالان دوبارہ پیش

شہباز تتلا قتل کیس، اعتراضات دور کرنے کے بعد چالان دوبارہ پیش

  

لاہور(نامہ نگار)شہباز تتلا قتل کیس میں پولیس نے سابق ایس ایس پی مفخر عدیل کے خلاف مقدمہ کاچالان اعتراضات دور کرتے ہوئے دوبارہ سیشن کورٹ میں جمع کروا دیا ہے،مفخرعدیل اور شہباز تتلا کی گاڑیوں کی سی سی ٹی وی فوٹیج بھی چالان کے ساتھ لف کی گئی ہے۔ پولیس کی جانب سے عدالت میں جمع کروائے گئے چالان میں کہا گیاہے کہ مفخر عدیل سے شہباز تتلا کا اے ٹی ایم کارڈ اور آئی ڈی کارڈ برآمدکیاہے،مفخر عدیل نے شہباز تتلا کی نعش کو جس نالے میں پھینکا اس کی نشان دہی بھی ملزم نے کی ہے،مفخر عدیل نے نعش کو تلف کرنے کے لئے 60 کلو تیزاب خریدا،مفخر عدیل نے تیزاب کی دکان کی نشان دہی بھی کردی ہے،مفخر عدیل کے ساتھی ملزم اسد بھٹی نے بتایا کہ میری موجودگی میں شہباز تتلا کو قتل کیا گیا،واضح رہے کہ پراسکیوشن کی جانب سے پولیس افسرمفخر عدیل کے خلاف قتل کے مقدمہ کاچالان اعتراضات لگا کر واپس کردیاگیا تھا۔

جو اب دوبارہ پراسیکیوشن کے اعتراضات دورکرکے عدالت میں جمع کروادیاگیاہے۔

مزید :

علاقائی -