نو ٹیکس نو ریٹرن نظام بحال کیاجائے، صنعتی تنظیمیں

نو ٹیکس نو ریٹرن نظام بحال کیاجائے، صنعتی تنظیمیں

  

فیصل آباد (اے پی پی) مختلف صنعتی تنظیموں نے نوٹیکس نوریٹرن کے نظام کو یقینی بنانے کیلئے ایس آر او 1125بحال کرنے کی اپیل کی ہے اور کہاہے کہ مذکورہ ایس آر او کے باعث 5زیروریٹڈ سیکٹرز، ویلیوایڈڈ ٹیکسٹائل، کھیلوں کے سامان، آلات جراحی، چمڑے کی مصنوعات اور قالین سازی سمیت دیگر شعبہ جات کو کئی مسائل کا سامنا ہے جبکہ سیلز ٹیکس کے نفاذ سے ان برآمدی شعبہ جات کی پیداواری لاگت میں بھی اضافہ ہوا ہے۔ آل پاکستان ٹیکسٹائل ایکسپورٹرز ایسوسی ایشن، پاکستان ٹیکسٹائل پروسیسنگ ملز ایسوسی ایشن اور سرجیکل گڈز مینو فیکچرنگ ایسوسی ایشن کے ترجمان نے میدیا سے بات چیت کے دوران کہاکہ یہ شعبہ جات پہلے ہی کورونا وائرس کی وباء کے حوالے سے شدید مالی بحران کا شکار ہیں۔

جبکہ سیلز ٹیکس ریفنڈ، انکم ٹیکس ریفنڈ، کسٹم ریبیٹ، ڈی ایل ٹی ایل اور ڈی ڈی ٹی کی ادائیگیاں پھنسنے کی وجہ سے بھی ان کی مالی مشکلات میں اضافہ ہوا ہے۔ انہوں نے بتایاکہ کورونا لاک ڈاؤن کے دوران صنعتوں کی بندش کے باعث بڑی تعداد میں برآمدی آرڈرز منسوخ ہونے پر بھی مذکورہ سیکٹرز سخت بحران کا شکار ہوئے ہیں۔ انہوں نے ارباب اختیار سے صورتحال کا فوری نوٹس لینے کا مطالبہ کیا ہے۔

مزید :

کامرس -