لاک ڈاﺅن کے دوران سوشل میڈیا پر تصویریں لگانے کے شوق نے نوجوان لڑکی کو جیل پہنچا دیا

لاک ڈاﺅن کے دوران سوشل میڈیا پر تصویریں لگانے کے شوق نے نوجوان لڑکی کو جیل ...
لاک ڈاﺅن کے دوران سوشل میڈیا پر تصویریں لگانے کے شوق نے نوجوان لڑکی کو جیل پہنچا دیا

  

نیویارک(مانیٹرنگ ڈیسک) امریکہ میں سوشل میڈیا پر تصویریں پوسٹ کرنے کا شوق ایک لڑکی کو مہنگا پڑ گیا۔ گرفتار کرکے جیل میں ڈال دی گئی۔ میل آن لائن کے مطابق 18سالہ الیزا ایلڈر نامی یہ لڑکی 6مئی کو امریکی ریاست ہوائی کے شہر ہونولولو پہنچی تھی۔ ریاست کے قانون کے تحت کسی بھی دوسری ریاست سے آنے والے شخص کے لیے 14دن قرنطینہ میں رہنا لازمی ہے لیکن الیزا نے اس قانون کی خلاف ورزی کر ڈالی اور پکڑی تب گئی جب اس نے اپنی تصاویر سوشل میڈیا پر پوسٹ کیں۔

رپورٹ کے مطابق وہ 6مئی کو ہونولولوپہنچی تھی اور اس کے دو دن بعد ہی اس نے تصاویر پوسٹ کرنی شروع کر دیں جس سے مقامی انتظامیہ کو خبر ہو گئی اور پولیس نے اسے گرفتار کرکے جیل میں ڈال دیا۔ پولیس کے مطابق الیزا ہونولولو میں ایک ریسٹورنٹ پر ملازمت بھی کرتی تھی اور اپنے گھر چھٹیاں گزار کر واپس آئی تھی۔ اسے ریسٹورنٹ سے حراست میں لیا گیا اور اس کے خلاف ریاست کے قرنطینہ آرڈر کی خلاف ورزی کرنے پر مقدمہ درج کر لیا گیا ہے۔

مزید :

ڈیلی بائیٹس -