بجلی صارفین پر 347ارب روپے کا بوجھ ڈالنے کی تجویز، کون کون سے ٹیکسز شامل کئے جانے کا امکان ہے؟تفصیل پڑھیں

بجلی صارفین پر 347ارب روپے کا بوجھ ڈالنے کی تجویز، کون کون سے ٹیکسز شامل کئے ...
بجلی صارفین پر 347ارب روپے کا بوجھ ڈالنے کی تجویز، کون کون سے ٹیکسز شامل کئے جانے کا امکان ہے؟تفصیل پڑھیں

  IOS Dailypakistan app Android Dailypakistan app

اسلام آباد(ڈیلی پاکستان آن لائن)بجلی صارفین کیلئے بری خبر، مہنگائی کے ستائے عوام پر 347ارب روپے کا بوجھ ڈالنے کی تجویز دی گئی ہے،اس حوالے سے سنٹرل پاور پرچیز ایجنسی کی درخواست میں نیپرا پر سماعت جاری ہے۔

نجی ٹی وی چینل دنیا نیوز کے مطابق سی سی پی اے کی جانب سے بجلی کے نرخوں میں 3روپے 48پیسے ماہانہ فی یونٹ  آپریٹر فیس شامل کرنے کی تجویز دی گئی ہے،کپیسٹی چارجز کے نام پر 17روپے 42پیسے فی یونٹ تک وصول کرنے کی تجویز دی گئی ہے جبکہ فیول کاسٹ کی مد میں 9روپے 34پیسے فی یونٹ متعین کرنے کی درخواست  کی گئی ہے۔

درخواست میں امریکا کی مہنگائی کا 2.4فیصد شرح ٹیرف میں شامل کرنے کی تجویز ہے،ملکی مہنگائی کا 12.20فیصد شرح آپریٹر فیس میں شامل کرنے کی تجویز ہے،سی پی پی اے درخواست میں بجلی کی خریداری میں 21.37فیصدسود شامل کرنے کی سفارش بھی کی گئی ہے۔

تاہم آئندہ مالی سال میں بجلی کمپنیوں کوکم از کم 27روپے 11پیسے بجلی فروخت کرنے کی تجویز دی گئی ہے جو بجلی کمپنیاں ٹیکسز شامل کرکے صارفین کو بجلی فروخت کریں گی،آئندہ مالی سال کیلئے بجلی کی 300روپے فی ڈالر میں خریداری کرنے کی تجویز دی گئی ہے۔