12ربیع الاول کو چناب نگر میںآل پاکستان”ختم نبوت کانفرنس“ہو گی، مجلس احرار

12ربیع الاول کو چناب نگر میںآل پاکستان”ختم نبوت کانفرنس“ہو گی، مجلس احرار

  

لاہور (سٹاف رپورٹر)مجلس احراراسلام پاکستان اور تحریک تحفظ ختم نبوت کے ایک اعلیٰ سطحی اجلاس میں فیصلہ کیا گےا ہے کہ 12ربیع الاول کو چناب نگر میںآل پاکستان”ختم نبوت کانفرنس“تزک واحتشام کے ساتھ منعقد ہوگی جس میں تمام مکاتب فکر کے جید علماءکرام اور رہنماشرکت کریں گے ،کانفرنس کے اختتام پر ہزاروں فرزندان اسلام ،مجاہدین ختم نبوت اور سرخ پوشان احرارچناب نگر میں دعوتی جلوس نکالیں گے اور قادےانےوں کو دعوت اسلام کافریضہ دہراےا جائےگا یہ فیصلہ مجلس احراراسلام پاکستان کے مرکزی نائب امیر سید محمد کفیل بخاری کی زیر صدارت اجلاس میں کیا گےا جس میں پروفیسرخالدشبیر احمد،عبداللطیف خالد چیمہ،مولانا محمد مغیرہ ،میاں محمد اویس ،قاری محمد یوسف احرار،ڈاکٹرمحمد عمر فاروق،حافظ ضیاءاللہ ہاشمی،مولانا تنویر الحسن،سید عطاءالمنان بخاری،مولانا محمد اکمل،مولانا فےصل متےن سرگانہ،حافظ محمد اسماعیل،ڈاکٹر محمد ظہیرحیدری،مولانا کریم اللہ،محمد آصف،قاری محمد قاسم ،حافظ محمدشاکر خان ،محمدخاور جاویدبٹ،شیخ مظہر سعید ،خالدمحمود،راناقمرالاسلام،حافظ محمد سلیم شاہ،محمد ظہیر اصغر،علی اصغر،حافظ محمدطیب چنیوٹی،مہر اظہر حسین وینس،غلام مصطفیٰ،طلحہٰ شبیراور دیگر رہنماﺅں اور مندوبین نے شرکت کی۔اجلا س میں طے پایا کہ تحریک ختم نبوت 1953ءکے دس ہزار شہداءکی یادمیں حسبِ سابق مارچ 2015ءمیں ملک بھر میں ”شہداءختم نبو ت کانفرنسوں“کا اہتمام کیا جائےگا جس کے مطابق یکم مارچ کو لاہور،5,6مارچ کو چناب نگر میں ،12مارچ کو گوجرانوالہ،13مارچ کو گجرات،26مارچ کو ملتان،یکم اپریل کو اوکاڑہ،2اپریل کو چیچہ وطنی ،3اپریل کو چنیوٹ ،24اپریل کو ٹوبہ ٹےک سنگھ،یکم مئی کو تلہ گنگ ،8مئی کو چشتےاں میں ختم نبوت کانفرنسیں منعقد ہوں گی۔جبکہ دیگر مقامات پرکانفرنسوں کا شیڈول بعد میں جاری کیا جائےگا۔پروفےسر خالد شبیراحمد،سید محمد کفیل بخاری،عبداللطیف خالد چیمہ اور مولانا محمد مغیرہ نے اجلاس کے شرکاءسے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ عقیدہ ختم نبوت کا تحفظ ہمارے ایمان کی سلامتی کی علامت ہے اور وطن عزےز کو اندرونی وبیرونی دشمنوں سے بچانے کےلئے ایک پر امن اور طویل جدوجہدکی ضرورت ہے ۔سید محمد کفیل بخاری نے اپنے صدارتی خطاب میں کہا کہ اسلام کی نشاة ثانیہ اب بہت دورنہیں لیکن عالم اسلام کو دہشت گردی کی طرف دھکیل کر استعمار جو مذموم مقاصد حاصل کرناچاہتاہے وہ اس میں آخر کارناکام ہوگا۔پروفیسر خالدشبیر احمدنے کہا کہ مجلس احراراسلام پاکستان کے کارکنوں اور نوجوانوں کو نئے جذبوں کے ساتھ آگے بڑھنا چاہیے۔بعد ازاں مجلس احراراسلام پاکستان کے سیکرٹری جنرل عبداللطیف خالد چیمہ نے پریس بریفنگ میں صحافیوں کو بتاےاکہ ہمارے بزرگوں نے 1934ءمیں قادےان میں داخل ہو کر فتنہ ارتداد مرزائیہ کا تعاقب شروع کیا تھا اور1976ءمیں قافلہ¿ احرارتحفظ ختم نبوت کا پرچم تھامے ربوہ میں داخل ہو اتھا 1976ءسے اب تک ہم نے یہاں پرامن جدوجہد کی ہے ختم نبوت کے تحفظ کی جدوجہد ہمارا دستوری وآئینی حق بھی ہے جبکہ قادےانےوں نے اس شہر پر قبضہ کررکھا ہے اور انہوں نے اس شہر میں مسلمانوں کا خون بھی بہایاہے ہم عدم تشدد کے قائل ہیں اور قانون کی عملداری پریقین رکھتے ہیں

مجلس احرار

مزید :

صفحہ آخر -