نامعلوم حملہ آور نے یہودی کی پشت میں چھرا گھونپ دیا

نامعلوم حملہ آور نے یہودی کی پشت میں چھرا گھونپ دیا
نامعلوم حملہ آور نے یہودی کی پشت میں چھرا گھونپ دیا

  

مقبوضہ بیت المقدس(ویب ڈیسک)مقبوضہ بیت المقدس میں ایک نامعلوم حملہ آور نے ایک یہودی کو پشت میں چھرا گھونپ دیا ہے۔ تفصیلات کے مطابق یہودی عبادت گزاروں کے ایک گروپ پر بیت حوروت کی جانب جاتے ہوئے حملہ کیا گیا ہے۔انسانی حقوق کی تنظیم ہیومن رائٹس واچ نے کہا ہے کہ اسرائیلی حملہ آوروں کی جانب سے فلسطینیوں کے گھر منہدم کرنا جنگی جرائم کے زمرے میں آ سکتا ہے۔ بیت حوروت یہود کا ایک مدرسہ ہے، اس کو قوم پرست ربی بینی ایلن نے 1999ءمیں کوہ زیتون پر تعمیر کیا تھا۔

واضح رہے کہ گذشتہ منگل کو مقبوضہ بیت المقدس میں دو فلسطینیوں نے ایک یہودی معبد پر حملہ کردیا تھا جس کے نتیجے میں ایک پولیس اہلکار سمیت پانچ افراد ہلاک ہوگئے تھے۔

مزید :

بین الاقوامی -