حکومت پنجاب سے چین ، تر ک کمپنیوں کے خوش آئند معاہدے

حکومت پنجاب سے چین ، تر ک کمپنیوں کے خوش آئند معاہدے
 حکومت پنجاب سے چین ، تر ک کمپنیوں کے خوش آئند معاہدے

  

پنجاب حکومت اور چینی و ترک کمپنیوں کے مابین سرمایہ کار ی کے150معاہدوں پر دستخط ہو گئے۔پنجاب حکومت اور پنجاب کے سرمایہ کاروں کے چین اور ترکی کی سرمایہ کار کمپنیوں کے درمیان 150سے زائد معاہدوں اور مفاہمتی یاداشتوں پر دستخط ہونا تاریخی سنگ میل ہے ،یہ معاہدے ٹرانسپورٹ ،انفراسٹر کچر ،توانائی ، ہاؤسنگ،کان کنی،صنعت، مینو فیکچرنگ، تعمیرات و مواصلات اور دیگر شعبوں میں طے پائے ہیں۔ حکومت پنجاب کا کہنا ہے کہ ان معاہدوں کو عملی شکل دینے کے لئے کوئی کسر اُٹھا نہیں رکھی جائے گی اور تمام ترقیاتی اہداف حاصل کئے جائیں گے۔ سیمینار میں صوبائی وزراء، اراکین قومی و صوبائی اسمبلی ،پاکستان میں چین کے سفیر ویڈانگ ، ترکی کے سفیر صادق بابر گر گن، ترکی میں پاکستان کے سفیر سہیل محمود ، چین میں پاکستان کے سفیر مسعود خالد،چیف سیکرٹری، چیئر مین منصوبہ بندی و ترقیاتی بورڈ عرفان الٰہی، کمشنر لاہور محمد عبداللہ خان سنبل، دانشوروں،کالم نگاروں، صنعت کاروں ، سرمایہ کاروں کے علاوہ چین، ترکی، جرمنی اور سوئٹزر لینڈ سے سرمایہ کاری کمپنیوں کے 250 حکام نے شرکت کی۔

وزیراعلیٰ محمد شہباز شریف نے سیمینار سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ آج تاریخی لمحہ ہے، جب چین اور ترکی کی سرمایہ کا کمپنیوں سے 150 سے زائد معاہدوں اور مفاہمتی یاداشتو ں پر دستخط ہوئے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ معاہدے پر عمل درآمدسے پاکستانی تاجروں اور چین و ترکی کے سرمایہ کاروں کے مابین روابط بڑھیں گے۔ ترکی اور چین کے سرمایہ کاروں کے ساتھ اتنی بڑ ی تعداد میں سرمایہ کاری کے معاہدوں کاطے پاجانا ہمارے لئے باعث مسرت اور فخر ہے۔ انہوں نے کہا کہ چائنہ پاکستان اکنامک کوریڈور کے منصوبوں پر تیز رفتاری سے عمل درآمد جاری ہے اور سی پیک چین کا پاکستان عوام کے لئے سفیروں اور پنجاب حکومت کے حکام کی کاوشوں کو خراج تحسین پیش کر تا ہوں۔انہوں نے کہا کہ سیمینار میں 250سے زائد بین الاقوامی سرمایہ کاروں کی شرکت سے دُنیا پر واضح ہو گیا ہے کہ پاکستان میں سرمایہ کاری کے لئے سازگار ماحول اور پنجاب میں سرمایہ کاری کے بڑے مواقع موجود ہیں۔ انہوں نے کہا کہ توانائی بحران کا خاتمہ اس لئے بھی ضروری ہے کہ صنعت اور زراعت پھلے پھولے، بیروز گاری کا خاتمہ ہو اور غربت میں کمی لائی جا سکے۔ انہوں نے کہا کہ چین اور ترکی کے سرمایہ کاروں نے جس طر ح بھرپور اعتمار کا اظہا ر کیا، اس پر ان کے شکر گزار ہیں۔ پاکستان کی تاریخ میں یہ سرمایہ کاری کا نفرنس مُلک کی تعمیر و ترقی میں اہم سنگ میل کی حیثیت رکھتی ہے اور 150 سے زائد سرمایہ کاری کے معاہدوں اور ایم اویوز پر دستخط ہونا بہت بڑی کامیابی ہے۔

چین کے سفیر سن ویڈانگ نے سیمینار سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ بین الاقوامی سیمینار میں 150سے زائد معاہدے اور ایم اویوز ہوئے ہیں، جس سے پنجاب میں سرمایہ کاری بڑھے گی۔طے پانے والے معاہدوں پر پنجاب کے وزیراعلیٰ شہباز شریف اور عوام کو مبارکباد پیش کرتا ہوں۔ انہوں نے کہا کہ پاکستان کی ترقی میں چین کی کمپنیاں بھرپوری تعاون کر رہی ہیں اور چینی سرمایہ کار کمپنیوں کے حکومت پنجاب اور پاکستان کے سرمایہ کاروں کے ساتھ طے پانے والے معاہدے چینی سرمایہ کاروں کا حکومتی پالیسیوں پر اعتماد کا اظہار ہے۔ انہوں نے کہا کہ سی پیک کے تحت چلنے والے منصوبوں پر بھی تیز رفتاری کے مواقع سے فائدہ اٹھائیں۔ انہوں نے کہا کہ چین اور پاکستان کی دوستی مضبوط ہے اور یہ ہمیشہ قائم رہے گی۔ اختتامی سیشن کے آخر میں پنجاب حکومت اور پاکستانی سرمایہ کار کمپنیوں کے ساتھ چین اور ترکی کی کمپنیوں کے مابین معاہدوں اور مفاہمت کی یاداشتوں پر دستخط کئے گئے۔ اس بین الاقوامی سرمایہ کاری کانفرنس میں کمشنر لاہور ڈویژن محمد عبداللہ خان سنبل کی سربراہی میں ان کی ٹیم نے مہمان سرمایہ کاروں کے لئے اعلیٰ انتظامی امور سرانجام دیئے، جس پر ضلعی انتظامیہ مبارکباد کی مستحق ہے۔

مزید :

کالم -