خالد خواجہ قتل کیس، حامد میر کی عبوری ضمانت منظور

خالد خواجہ قتل کیس، حامد میر کی عبوری ضمانت منظور

  

اسلام آباد(مانیٹرنگ ڈیسک) اسلام آباد ہائی کورٹ نے خالد خواجہ قتل کیس میں سینئر صحافی اور تجزیہ کار حامد میر کی عبوری درخواست 50لاکھ روپے مچلکوں کے عوض ضمانت منظور کر لی ۔ایڈیشنل ڈسٹرکٹ اینڈ سیشن جج عدنان خان کی عدالت میں حامد میر نے اپنے وکیل حافظ عرفات کے ذریعے ضمانت قبل از گرفتاری کی درخواست دائر کرتے ہوئے موقف اختیار کیا کہ ان کا خالد خواجہ کے قتل سے کوئی تعلق نہیں ہے اور 7 سال بعد مقدمے کا اندراج بد نیتی ثابت کرتا ہے جبکہ عدالت اس سے قبل انہیں بے گناہ قرار دے چکی ہے۔انہوں نے موقف اختیار کیا کہ خالد خواجہ کی بیوہ اعتراف کر چکی ہے کہ خالد خواجہ خود وزیر ستان گیا تھا۔انہوں نے درخواست میں مزید کہا کہ درخواست گزار کا خالد خواجہ کے اغواء اور قتل سے کوئی تعلق نہیں ہے لہٰذا اس کی ضمانت قبل از گرفتاری منظور کی جائے۔حامد میر کی درخواست پر عدالت نے 50 لاکھ روپے مچلکوں کے عوض عبوری ضمانت منظور کرتے ہوئے پولیس سے رپورٹ طلب کر لی ہے۔

حامد میر/عبوری ضمانت

مزید :

صفحہ آخر -