ایم ڈی اے کی علامہ اقبال ہاؤسنگ سکیم ٹھپ کرنے کی تیاریاں

ایم ڈی اے کی علامہ اقبال ہاؤسنگ سکیم ٹھپ کرنے کی تیاریاں

ملتان(ملک اعظم سے) ملتان ڈویلپمنٹ اتھارٹی گزشتہ تین سالوں سے علامہ اقبال ٹاؤن کے قیام کا راگ الاپتی رہی۔ رواں سال اس منصوبے پر عمل درآمد کا اعلان بھی کردیا۔ ہزار ایکڑ اراضی کیلئے تحصیل ملتان سٹی اور تحصیل ملتان صدر کے 12موضعات میں اس پروجیکٹ کے قیام کا عندیہ بھی دے دیا۔بچ خسرو آباد، کوٹ مہرا، صالح مہے، بستی نو، بیادرپور نیل کوٹ، نانڈلہ، بھینڈا ، بچ مبارک، سیر کھاڑک(بقیہ نمبر21صفحہ12پر )

مبارک مبارک اول اور تاج پور سندیلہ میں ایک ہزار ایکڑ کی خریداری کیلئے انوسٹرز، پارٹنرز اور ایجنٹس سے درخواستیں طلب کرلیں گئیں۔30نومبر تک درخواستیں وصول کرنے کے بعد ان پر پراسس شروع کردیا۔ ضلع ملتنا کے ناردرن ایریا میں قائم کالونی ڈویلپرز کو شدید پریشانی کا سامنا کرنا ۔ اس ہاؤسنگ پروجیکٹ میں اراضی کی قیمت سٹاک مارکیٹ کے شیئرز کی قیمت کیطرح اچانک گر گئی۔ جس کیوجہ سے ہزاروں ایکڑ پر قائم اس ہاؤسنگ پروجیکٹ کے انوسٹرز کو اربوں روپے کا خسارے کا سامنا کرنا پڑا۔ اسی طرح واپڈا ٹاؤن فیز ون، ٹو اور فیز تھری میں بھی پلاٹس کی قیمیتں گر گئیں۔ معلوم ہوا ہے کہ ان دونوں ہاوسنگ سکیموں کیطرح ناردران بائی پاس پر قائم دیگر کالونیوں کی انوسمنٹ پر برا اثر پڑا۔ جبکہ زرعی اراضی کی قیمتوں میں یکدم اضافہ ہوگیا۔ علامہ اقبال ٹاؤن کے اعلان کے بعد اراضی مالکان نے تمام خریداروں کو یکسر انکار بھی کردیا۔ اس ساری صورتحال نے میگا ہاوسنگ سکیم کی انتظامیہ نے اندر خانہ ایم ڈی اے انتظامیہ پر دباؤ بڑھا دیا ۔ اسی کے ساتھ نئی کالونیوں کے قیام کی خواہش رکھنے والے انوسٹرز نے ایم ڈی اے کے آفیسران سے ملاقاتیں شروع کردیں۔ اس سارے عمل کے نتیجے میں ایم ڈی اے نے جان بوجھ کر علامہ اقبال ٹاؤن کے قیام وقتی طور پر روک دیا۔ معلوم ہوا ہے ابتدائی طور پر شہریوں کو مطمیئن کرنے کیلئے مختلف عذر پیش کیے جائیں گے اور آخر کار اس پروجیکٹ کو ہمیشہ کیلئے ختم کردیا جائے گا۔

مزید : ملتان صفحہ آخر