3ماہ کی چھٹی منظور، اسحاق ڈار کا قلمدان لے لیا گی ، پارک رووس مشترکہ کمیشن سربراہی سے بھی سبکدوش کر دیا

3ماہ کی چھٹی منظور، اسحاق ڈار کا قلمدان لے لیا گی ، پارک رووس مشترکہ کمیشن ...

  

اسلام آباد، لندن(مانیٹرنگ ڈیسک، مانیٹرنگ ڈیسک)اسحاق ڈار کی 3 ماہ کی چھٹی فوری طور پر منظور کرتے ہوئے وزیر خزانہ کا قلمدان ان سے واپس لے لیا گیا ہے جو اب وزیراعظم شاہد خاقان عباسی کے پاس رہے گا۔اسحاق ڈار کی چھٹی کی منظوری اور قلمدان واپسی کے الگ الگ نوٹی فکیشن جاری کر دیئے گئے۔قواعد کے تحت اسحاق ڈار3 ماہ سے قبل آکر ذمے داریاں سنبھال سکتے ہیں، اگر اس مدت میں انہوں نے ذمہ داریاں نہ سنبھالیں تو اسحاق ڈار وفاقی وزیر نہیں رہیں گے۔چھٹی کے دوران وفاقی وزیر کا عہدہ اسحاق ڈار کے پاس رہے گا۔ ذ ر ا ئع کے مطابق وزارت خزانہ کی یومیہ ذمہ داریاں چلانے کے لیے رواں ہفتے وزیر مملکت یا مشیر خزانہ کی تعیناتی کا بھی امکان ہے،تفصیلات کے مطابق وزیر خزانہ اسحاق ڈارکی جانب سے اپنی علالت کے باعث ذمہ داریوں سے سبکد و ش ہونے کیلئے وزیر اعظم شاہد خاقان عباسی کولکھا گیاخط موصول ہوگیا ہے جس کے بعد وزیر خزانہ کو وزارت کی ذمہ داریوں سے سبکدوش کر دیا گیا ہے جبکہ اسحا ق ڈار سے پاک روس مشترکہ کمیشن کی سربراہی کی ذمہ داری بھی واپس لے لی گئی ہے۔ذرائع کا کہنا ہے خط موصول ہونے کے بعد شاہد خاقان عباسی نے پارٹی صدر نواز شریف سے اس معاملے پر مشا و ر ت کی اور وزیر خزانہ کی درخواست منظور کر تے ہوئے انہیں ذمہ داریوں سے سبکدوش کر دیا ہے۔ اسحاق ڈار کی وزارت خزانہ سے رخصت کے بعد وہ پاک روس مشترکہ کمیشن کی سر بر ا ہی سے بھی محروم ہوگئے ہیں اور وزیر اعظم نے یہ اہم ذمہ داری وزیر دفاع کو سونپ دی ہے۔نجی ٹی وی دنیا نیوز نے ذرائع کے حوالے سے د عویٰ کیا ہے وزیر اعظم وزارت خزانہ کا قلمدان اپنے پاس رکھیں گے اور 28 نومبر تک ڈھائی ارب ڈالر کے سکوک اور یورو بانڈز کی بولیوں کی منظوری بھی شاہد خاقان عباسی ہی دیں گے۔ گز شتہ دنوں ان کے مستعفی ہونے کی خبریں سامنے آئی تھیں لیکن وزیراعظم کے ترجمان مصد ق ملک نے اس کی تردید کرتے ہوئے کہا تھا اسحاق ڈار بدستور وزیر خزانہ ہیں۔اسحاق ڈار کی جانب سے وزیراعظم کو لکھے گئے خط میں وزیر خزانہ کی ذمہ داریوں سے سبکدوش کرنے کی بھی در خو ا ست کی گئی ہے ۔ و ز یر خزانہ اسحاق ڈار نے وزیراعظم کو خط لکھنے سے پہلے پارٹی صدر نو ا زشریف کو اعتماد میں لیا۔ذرائع نے بتایا ڈاکٹروں نے اسحاق ڈار کو مشورہ دیا ہے وہ طبیعت کی بہتری تک سفر نہیں کرسکتے۔ذرائع کا یہ بھی کہنا تھا اسحاق ڈار نے ہمیشہ عدالتوں کا احترام کیا ہے اور جب ان کی صحت اجازت دے گی وہ عدالتوں کے سامنے پیش ہوں گے، جبکہ اسحاق ڈا ر کی غیر موجودگی میں وزیراعظم کی زیر صدارت اقتصادی مشاورتی کونسل ذمہ داریاں سنبھالے گی۔وفاقی وزیر خزانہ تقریباً ایک ماہ قبل لندن پہنچے تھے جہاں ہارلے اسٹریٹ ہسپتال میں ان کا علاج جاری ہے۔اپنے دل کے علاج کے سلسلے میں وہ ہفتے میں تین مرتبہ ہسپتا ل جارہے ہیں جبکہ وہ ایک ہفتہ ہسپتال میں داخل بھی رہے ہیں۔واضح رہے وزیر خزانہ اسحاق ڈار کیخلاف احتساب عدالت میں آمدن سے زائد اثاثوں کا ریفرنس ز یر سماعت ہے جس میں ان پر فرد جر م عائد ہوچکی ہے جبکہ مسلسل غیر حاضری پر عدالت نے وزیر خزانہ کو مفرور قرار دیتے ہوئے انہیں اشتہا ر ی قرار دینے کی کارروائی شروع کر نے کا حکم دیا ہے۔نیب نے اسحاق ڈار کا نام ای سی ایل میں ڈالنے کیلئے وزارت دا خلہ کو خط لکھ دیا ہے ۔ اسحاق ڈار کے وکیل نے عد ا لت کو بتایا ان کے مؤکل دل کے عارضے میں مبتلا ہیں جس کے علاج کے سلسلے میں ہی وہ لندن میں موجود ہیں ۔

مزید :

کراچی صفحہ اول -