اپوزیشن کے پلان بی کا دوسرا مرحلہ شروع،ن لیگ،پی پی قیادت غائب 

اپوزیشن کے پلان بی کا دوسرا مرحلہ شروع،ن لیگ،پی پی قیادت غائب 

  



اسلام آباد (سٹاف رپورٹر)اپوزیشن جماعتوں کے پلان بی کا دوسرا مرحلہ شروع،اسلام آباد میں اپوزیشن کے احتجاجی جلوس میں (ن)لیگ کے رہنما ڈاکٹر طارق فضل چوہدری سمیت مقامی قیادت غائب، پیپلز پارٹی بھی شریک نہیں ہوئی،مقررین نے واضح کیا اس نااہل حکومت اور وزیر اعظم کو جلد جانا ہوگا،آزادی مارچ ختم نہیں ہوا یہ جلد اپنے منطقی انجام تک پہنچنے والا ہے،عمران خان کے استعفیٰ تک ہر جمعہ کو احتجاجی مظاہرے ہونگے، نااہل حکمران سے نجات تک چین سے نہیں بیٹھیں گے۔جمعہ کونیشنل پریس کلب کے سامنے احتجاجی مظاہرے میں جے یو آئی، پختونخوا ملی عوامی پارٹی، جمعیت اہلحدیث کے کا رکنوں نے شرکت کی، مسلم لیگ (ن)،پیپلز پارٹی،جے یو پی اور دیگر جماعتوں کے   رہنما شریک ہوئے نہ ہی کارکن۔مظاہرین سے مفتی کفایت اللہ،مولانا عبدالمجید ہزاروی،پشتونخواہ ملی عوامی پارٹی کے رہنما عبدالقیوم اچکز ئی نے خطاب کیا، شرکا گو عمران گو اور حکومت مخالف نعرہ بازی کرتے رہے، مقررین نے کہا تحریک انصاف حکومت نے ملک کی معیشت کو تبا ہ کرکے رکھ دیا ہے، یہ ناجائز حکومت ہے اور اب اسکی بنیادیں ہل چکی ہیں، عمران احمد نیازی آپ نے 106بار یوٹرن لیا،آپ نے والد ین کے نام کو بدل لیا آپ نے کہا این ار آو نہیں دونگا، پھر یہ تم نے یہ کیا کیا؟آپ نے کہا تھا مہنگائی ہوگی تو استعفیٰ دونگا، اب استعفیٰ نہیں دیا آپ نے دعویٰ کیا ایک کروڑ نوکریاں دوں گا لیکن آپ تو لوگوں کے روزگار چھین رہے ہیں، مولانا فضل الرحمن نے اعلان کیا ہے آئند جمعہ کو بھی 3بجے متحدہ اپوزیشن کی طرف سے احتجاج ہوگا،بعدا زاں مظاہرین پرامن طورپر منتشر ہوگئے۔

اپوزیشن پلان بی 

مزید : صفحہ اول