قرآن پاک کی بے حرمتی کا واقعہ، ناروے سے تعلق رکھنے والی کمپنی ٹیلی نار بھی میدان میں آگئی، اعلان کردیا

قرآن پاک کی بے حرمتی کا واقعہ، ناروے سے تعلق رکھنے والی کمپنی ٹیلی نار بھی ...
قرآن پاک کی بے حرمتی کا واقعہ، ناروے سے تعلق رکھنے والی کمپنی ٹیلی نار بھی میدان میں آگئی، اعلان کردیا

  



لاہور(ڈیلی پاکستان آن لائن) ناروے میں ایک مسلمان نوجوان نے قرآن پاک جلانے کی مذموم کوشش ناکام بنا دی تاہم اسے پولیس نے حراست میں لے لیا، دراصل اسلام مخالف تنظیم (سیان)کے کارکنوں نے ریلی نکالی جس میں قرآن مجید کی بے حرمتی کررہے تھے ۔اس واقعے کے بعد  کئی لوگ سوشل میڈیا پر ناروے اور اس کی پراڈکٹس یا کمپنیوں کے بارے میں بات کررہے تھے ، اسی دوران بنیادی طورپر ناروے سے تعلق رکھنے والی پاکستان میں آپریشنل ٹیلی کام کمپنی ٹیلی نار پاکستان بھی میدان میں آگئی ۔ 

اپنے ٹوئٹر کائونٹ پر اپنی ایک ٹوئیٹ میں ٹیلی نار پاکستان کی انتظامیہ نے لکھا کہ’ ٹیلی نار پاکستان کسی بھی مذہب کی توہین کرنے والے عوامل کی مذمت کرتا ہے۔ ایک مسلمان ملک میں کام کرتے ہوئے  ہم اس فعل پر گہری تشویش کا اظہار کرتے ہیں اور ٹیلی نار کی احترام پر مبنی اہم اقدار کی حوصلہ افزائی کرتے ہیں‘۔

تقریباً یہی ٹوئیٹ کچھ دیر بعد کم انگریزی سمجھنے والے صارفین کے لیے اردو میں بھی کیاگیااور کمپنی کی طرف سے لکھا گیا کہ ’ ٹیلی نار پاکستان کسی بھی مذہب کی توہین کرنے والے عوامل کی مذمت کرتا ہے۔ ایک مسلمان ملک کا حصہ ہوتے ہوئے ہم اس فعل پر گہری تشویش کا اظہار کرتے ہیں اور ٹیلی نار کی احترام پر مبنی اہم اقدار کی حوصلہ افزائی کرتے ہیں‘۔

مزید : ڈیلی بائیٹس /سائنس اور ٹیکنالوجی