سائنسدان بارانی علاقوں کےلئے بیجوںکی موزوں اقسام تیار کریں:علی طاہر

سائنسدان بارانی علاقوں کےلئے بیجوںکی موزوں اقسام تیار کریں:علی طاہر

  

 لاہور(پ ر)علی طاہر سےکرٹری زراعت پنجاب نے زرعی سائنسدانوں پر زور دیا ہے کہ وہ بارانی علاقوں کے لیے فصلو ں ،پھلوں اور سبزیوں کی موزوں اقسام کی تیاری پر زیادہ توجہ مرکوز کریں تاکہ ان علاقوں کی پیداواری استعداد سے استفادہ کیا جا سکے ۔یہ بات انہوں نے بارانی زرعی تحقےقاتی ادارہ چکوال اور تحقےقاتی ادارہ برائے تحفظ آب و اراضی چکوال کے دورہ کے موقع پر کہی۔ انہوں نے کہا کہ بارانی علاقوں میں زیتون ، انگور ، کھجور ، آڑو ، انجیر ، ترشاوہ پھلوں ، گندم ، مونگ پھلی ، مونگ، سبزیوں، چارہ جات، تیل داراجناس اور پھولوں کی کاشت کوفروغ دیا جا سکتا ہے اور اس طرح بارانی زمینوں کو منافع بخش بنا کر کاشتکاروں کے منافع میں اضافہ ممکن ہے ۔انہوں نے بتایا کہ حکومت نے بارانی علاقوں میں زیتون اور دیگر پھلدار پودوں کی کاشت کو فروغ دینے کے لیے واضح فریم ورک تیار کر لیا ہے ۔جس کے ذریعے ان علاقوں میں پھلوں کی پیداوار میں اضافہ ہو گا اور خوردنی تیل کی پیداوار میں اضافہ کر کے زرمبادلہ کی بچت کی جا سکے گی ۔

بارانی زرعی تحقیقاتی ادارہ چکوال کے ڈائریکٹر ڈاکٹر محمد طارق نے سیکرٹری زراعت پنجاب کو ادارے کی تحقیقاتی سرگرمیوں سے آگاہ کیا ۔انہوں نے بتایا کہ ادارہ کے 89ہیکٹر رقبہ میں سے 65ہیکٹر رقبہ کو ریسرچ کے لیے مختص کر دیا گیا ہے ۔جہاں پر فصلوں ،پھلوں ، سبزیوںاور پھولوں پر تحقیقاتی کام جاری ہے ۔ادارہ کاشتکاروں کے لیے بارانی علاقوں کے لیے زیادہ موزوں اقسام تیار کرنے کے لیے کوشاں ہے۔ادارہ نے ٹماٹر کی بے موسمی کاشت کو فروغ دینے کی حکمت عملی بھی وضع کر لی ہے ۔ جس سے ٹماٹر کی بے موسمی پیداوار میں اضافہ ہو گا۔

مزید :

کامرس -