دھرنے کا خاتمہ طاہر القادری کی زندگی پر سوالیہ نشان ہے،اشر ف جلالی

دھرنے کا خاتمہ طاہر القادری کی زندگی پر سوالیہ نشان ہے،اشر ف جلالی

  

لاہور(سٹاف رپورٹر)سربراہ تحریک صراطِ مستقیم پاکستان ڈاکٹر محمد اشرف آصف جلالی نے اپنے بیان میں کہا ہے کہ انقلاب لائے اور حکومت گرائے اور مقتولوں کا قصاص لیے بغیر دھرنے کا خاتمہ طاہر القادری کی پوری زندگی پر سوالیہ نشان بن گیادعوؤں ،وعدوں اور قسموں کا جس طرح خون کیا گیا اس کی تاریخ میں مثال نہیں ملتی دھرنے کامیاب کرنے کی خاطرمقدس شخصیات کو واقعات کے ساتھ بار بار دھرنے اور اس کے شرکاء کو جوڑ کر اسلامی تعلیمات کی تو ہین کی ابتداء کی گئی دھرنا عریانی ،فحاشی اور اخلاقی پستی کی بھیانک یادیں چھوڑ کر ختم ہو گیا تاریخ میں اسے ایک انتہائی دلچسپ ڈرامے کے طور پر یاد رکھا جائے گا طاہر القادری نے لفظ انقلاب کا امیج خراب کر دیا ہے ۔ نسل نو جو ٹی وی چینلوں پر کئی دنوں تک انقلاب شو دیکھا ہے اب انہیں لفظ انقلاب کا تقدس سمجھانے میں کافی دیر لگے گی ڈی چوک سے پسپا ہونے والا طاہر القادری گلی کوچوں میں چند روز شور کر کے خاموش ہو جائے گا انقلاب کے بغیر لوٹنے والوں کا ضمیر جب انہیں ملامت کر ے گا تو وہ کہیں گے ۔

مزید :

میٹروپولیٹن 1 -