طاہر القادری ہماری تجاویز مان لیتے تودھرنے سے سرخرو ہو کر لوٹتے، ابوالخیرمحمد زبیر

طاہر القادری ہماری تجاویز مان لیتے تودھرنے سے سرخرو ہو کر لوٹتے، ...

لاہور(سٹاف رپورٹر)جمعیت علماءپاکستان کے صدر ملی یکجہتی کونسل کے سربراہ ڈاکٹر صاحبزادہ ابوالخیرمحمد زبیرنے کہا ہے کہ طاہر القادری صاحب سے دھرنے میں ملاقات کر کے ہم نے ملی یکجہتی کونسل کی طرف سے بڑی معقول تجاویز ان کو دی تھیںاگر وہ ہماری تجاویز کو مان لیتے تودھرنے سے بڑے سرخرو ہو کر لوٹتے اور قوم کو بہت سے فوائد سے مالا مال کرجاتے صاحبزادہ زبیر نے کہا کہ ہم نے قادری صاحب کو یقین دھانی کرائی تھی کہ ہمارے مصالحتی فارمولے کو تسلیم کرنے کی صورت میں تمام مذہبی جماعتیں آپ کےساتھ ہوں گی ۔صاحبزادہ زبیر نے کہا کہ میں نے ملک کے نامورروحانی گھرانوںکے سجادہ نشین حضرات اور اہلسنت و الجماعت کے اکابرین اور قائدین کے ایک وفد کے ذریعہ ان سے ملاقات کر کے ملک میں نظام مصطفی ﷺ کی تحریک کو مزید آگے بڑھانے کی بھی پیشکش کی تھی لیکن افسوس انہوں نے اس کو بھی مسترد کر کے اپنی تحریک کو سخت نقصان پہنچایاہے انہوں نے کہا کہ اب بھی وقت ہے کہ قادری صاحب ملک کی دیگر مذہبی اورسیاسی جماعتوں کے تحفظات دور کرکے ان کو اعتماد میںلیکر آگے بڑھیں تاکہ انکی تحریک کامیابی سے ہمکنارہو ورنہ ان کے جلسوںاور دیگر شہروں میں ان کے دھرنوں کا انجام بھی ان کے ان دو دھرنوں سے مختلف نہیں ہوگا۔علاوہ ازیںجمعیت علمائے پاکستان کے صدر ملی یکجہتی کونسل کے سربراہ ڈاکٹر صاحبزادہ ابوالخیرمحمد زبیر نے جے یو پی لاڑکانہ کے صدر مفتی عبدالنبی لانگا کی مسجد و مدرسے پردھشت گردوں کے حملے کو ملک میں فتنہ وفساد کرانے کی گھناو¿نی سازش قرار دیتے ہوئے کہا کہ محرم الحرام کے مقدس مہینے سے قبل ہی اس قسم کے واقعات کا شروع ہونا قوم کے لئے انتہائی تشویش کا باعث ہے

ابوالخیرمحمد زبیر

مزید : صفحہ آخر