مولانا اعظم حملہ کیس:گرفتار دونوں ملزموں کی سزائے موت عمر قید میں تبدیل

مولانا اعظم حملہ کیس:گرفتار دونوں ملزموں کی سزائے موت عمر قید میں تبدیل

لاہور(نامہ نگار خصوصی )لاہورہائیکورٹ نے سابق ایم این اے مولانا اعظم طارق پر حملہ کے الزام میں گرفتار دونوں ملزموں کو سنائی جانیوالی سزا ئے موت عمرقید میں تبدیل کردی۔ لاہور ہائیکورٹ کے مسٹرجسٹس صداقت علی خان اورمسٹر جسٹس عبدالسمیع پرمشتمل دو رکنی بینچ نے اپیل کی سماعت کی تو ملزم غلام رضانقوی اورظہیر احمد کی جانب سے موقف اختیار کیا گیا کہ 1994کو مولانا اعظم طار ق کے قافلے پر حملہ کیاگیا جس کے نتیجہ میں 2گن مین جاں بحق ہوئے ،سیاسی انتقامی کاروائی کا نشانہ بناتے ہوئے اس مقدمہ میں گرفتار کرکے جیل بھجوادیاگیا اور ٹرائل کورٹ نے حقائق سنے بغیر سزائے موت سنادی حالانکہ اس مقدمہ سے کوئی تعلق نہیں ،سرکاری وکیل نے موقف اختیار کیا کہ تفتیش میں دونوں ملزم گنہگار پائے گئے ہیں ۔عدالت نے تمام دلائل سننے کے بعد دونوں ملزموں کوسنائی جانیوالی سزا عمر قید میں تبدیل کر دی ہے۔

سزائے موت

مزید : صفحہ آخر