زیادہ بارشوں کی وجہ سے سیلابی صورت حال پیدا ہوئی ، یاور زمان

زیادہ بارشوں کی وجہ سے سیلابی صورت حال پیدا ہوئی ، یاور زمان

  

لاہور ( خبرنگار) صوبائی وزیر آبپاشی میاں یاور زمان نے کہا ہے کہ سیلابی نقصانات کو کم کرنے کے لئے بیراجوںاور ہیڈ ورکس پر مشتمل نہری ڈھانچے کی موجودہ استعداد میں اضافہ ناگزیر ہے ۔ انہوں نے مزید کہا کہ رواں سال بہت زیادہ بارشوں کی وجہ سے سیلابی صورت حال پیدا ہوئی تاہم محکمہ آبپاشی نے بروقت اقدامات کر کے نہری نظام کی حفاظت کو یقینی بنایا۔یہ بات انہوں نے مقامی ہوٹل میں محکمہ آبپاشی کی جانب سے فلڈ مینجمنٹ کے حوالے سے منعقدہ دو روزہ سیمینار کی صدارت کے دوران اپنے خطاب میںکہی۔ سیمینار میں سیکرٹری آبپاشی پنجاب سیف انجم، ایڈیشنل سیکرٹری آبپاشی سید حیدر اقبال ، ایڈیشنل سیکرٹری (ٹیکنیکل) خالد حسین قریشی، چیف انجینئرڈرینج اینڈ فلڈ محمد یونس بھٹی، ممبر ارسا راو¿ ارشاد علی خان، کمشنر انڈس واٹرٹریٹی مرزا آصف بیگ، جنرل مینجر پیڈا افضل انجم طور، چیف میٹریالوجسٹ محمد ریاض، چیف مانیٹرنگ حبیب اللہ بودلہ کے علاوہ واپڈا، نیسپاک ، انٹر نیشنل واٹر مینجمنٹ انسٹیٹیوٹ کے نمائندگان اور محکمہ آبپاشی کے سینئرافسران نے شرکت کی۔ سیمینار میں خطاب کرتے ہوئے وزیر آبپاشی نے کہا کہ رواں برس معمول سے زیادہ بارشیں ہونے کے سبب پنجاب میں سیلابی صورتحال پیدا ہوئی تاہم محکمہ آبپاشی نے بروقت ضروری اقدامات کرکے نہری ڈھانچے کی حفاظت کو یقینی بنایا۔ انہوں نے کہا کہ محکمہ آبپاشی کے افسران اور فیلڈ عملے نے نہایت دلجمعی سے سیلاب کے دوران اپنے فرائض ادا کئے اوراُن کا باہمی رابطہ بھی مثالی رہا۔ صوبائی وزیر نے کہا کہ وزیر اعلیٰ پنجاب کی ہدایت پر تمام سرکاری اداروں کو سیلاب سے قبل اپنی تیاریاںمکمل رکھنے کی تلقین کی گئی جبکہ میں نے دوران سیلاب تمام حفاظتی اقدامات اور بحالی کے کاموں کی از خود نگرانی کی تاکہ جانی ومالی نقصانات سے ہر ممکن تحفظ یقینی بنایا جا سکے انہوں نے مزید بتایا کہ رواں سال سیلاب سے 16 اضلاع متاثر ہوئے جہاںسے سیکرٹری آبپاشی کی نگرانی میں سیلابی پانی کی نکاسی کا کام مکمل کر لیا گیا ہے ۔

 یاورزمان

مزید :

صفحہ آخر -