نیب کا پی ڈبلیو ڈی کے چیف انجینئر شاہ دین شیخ کیخلاف ریفرنس دائر کرنیکا فیصلہ

نیب کا پی ڈبلیو ڈی کے چیف انجینئر شاہ دین شیخ کیخلاف ریفرنس دائر کرنیکا فیصلہ ...

                          اسلام آباد(اے این این)قومی احتساب بیورو(نیب)کے ایگزیکٹو بورڈکا بدعنوانی میں ملوث پی ڈبلیو ڈی کے چیف انجینئر شاہ دین شیخ اور دوسرے ملزمان کے خلاف ریفرنس دائر کرنے کا فیصلہ، یوٹیلٹی سٹورز کارپوریشن کے ڈپٹی منیجنگ ڈائریکٹر مسعود عالم نیازی کے خلاف تحقیقات کی منظوری ، چیئرمین سندھ ٹیکسٹ بورڈ مشتاق احمد شاہانی کا کیس محکمانہ کارروائی کیلئے واپس بھیج دیاگیا، چیئرمین نیب قمر زمان چوہدری نے احتساب بیورو اچھے نظم و نسق کے ساتھ بدعنوانی کا خاتمہ یقینی بنا ئے گا۔ ترجمان نیب کی طرف سے جاری بیان کے مطابق بدھ کو قومی احتساب بیورو کے چیئرمین قمر زمان چوہدری کی زیر صدارت نیب کے انتظامی بورڈ کا اجلاس ہوا جس میں مختلف معاملات کا جائزہ لیا گیا۔ اجلاس میں 4 مقدمات اور دو شکایات کی تحقیقات کی منظوری دی گئی۔ اجلاس میں پی ڈبلیو ڈی کے چیف انجینئر شاہ دین شیخ اور دوسرے ملزمان کے خلاف ریفرنس دائر کرنے کا فیصلہ کیا گیا قومی اسمبلی کے حلقہ این اے 51 گجر خان کے ترقیاتی کاموں میں بد عنوانی کا بھی جائزہ لیا گیا ۔ نیب نے سی ڈی اے کے ٹھیکیدار سردار محمد اشرف کی طرف سے 12 کروڑ روپے واپس کرنے کی درخواست منظور کرلی ہے۔ سردار اشرف پر فیض آباد پیرودھائی روڈ کی تعمیر میں گھپلے کا الزام تھا اور اس نے اس کیس میں12 کروڑ روپے واپس کرنے کی درخواست کی تھی۔ بورڈ نے4 مقدمات کی تحقیقات کی منظوری دی جس میں پنجاب نجکاری بورڈ کے چیئرمین کے خلاف تحقیقات بھی شامل ہیں اس کے علاوہ سندھ انجینئرنگ کے سابق سربراہ اظہر جعفری کے خلاف تحقیقات کی منظوری دی گئی ہے۔ اظہر جعفر پر قومی خزانے کو ڈیڑھ کروڑ روپے کا نقصان پہنچانے کا الزام تھا۔ اجلاس میں یوٹیلٹی سٹورز کارپوریشن کے ڈپٹی منیجنگ ڈائریکٹر مسعود عالم نیازی کے خلاف تحقیقات کی بھی منظوری دی گئی ہے۔ مسعود عالم پر ظاہر کی گئی آمدن سے زائد اثاثے رکھنے کا الزام ہے ۔ نیب نے ڈائریکٹر کسٹم اخلاق خٹک کے خلاف تحقیقات کی بھی منظوری دی ہے ۔ اخلاق خٹک پر بھی ظاہر کی گئی آمدن سے زائد اثاثے رکھنے کا الزام ہے ۔ بورڈ کے اجلاس میں دو شکایات کی تحقیقات کی منظوری دی گئی ہے جس کے تحت سندھ سے تعلق رکھنے والے سابق ایم این اے شفقت شاہ شیرازی اور ٹھٹھہ سے سابق رکن سندھ اسمبلی اعجاز شاہ شیرازی کے خلاف شکایات کے حقائق کا تعین ہوگا ان دونوں رہنماﺅں پر بدعنوانی اور آمدن سے زائد اثاثے رکھنے کے الزامات ہیں۔ اجلاس میں آئیسکو کے سابق صدر جاوید پرویز کے خلاف شکایات کی تحقیقات کی بھی منظوری دی ہے ۔ جاوید پرویز اور دیگر ملزمان پر بدعنوانی اور اختیارات کے ناجائز استعمال کا الزام ہے ۔ اجلاس میں چیئرمین سندھ ٹیکسٹ بورڈ مشتاق احمد شاہانی کا کیس محکمانہ کارروائی کیلئے واپس بھیجنے کا فیصلہ کیا گیا ہے۔ سندھ ٹیکسٹ بورڈ کے اس کیس میں ملزمان نے نیب کو 4 کروڑ روپے واپس کردئیے تھے ۔ نیب نے عثمان انٹرپرائزز کے عمران شوکت کے خلاف تفتیش ختم کرنے کا فیصلہ کیا گیا ہے اور خیبرپختونخوا کے عباس خان کے خلاف بھی تحقیقات ختم کردی گئی ہیں۔ اجلاس میں چیئرمین نیب قمر زمان چوہدری نے قومی احتساب بیورو کے تمام شعبوں کو شفاف انداز میں قانون کے مطابق تحقیقات کی ہدایت کرتے ہوئے اس عزم کا اظہار کیا ہے کہ احتساب بیور اچھے نظم و نسق کے ساتھ بدعنوانی کا خاتمہ یقینی بنا ئے گا۔

مزید : صفحہ آخر