گھر کے اندر چور گھس آیا اور اندر اکیلی خاتون، پھر چور کے ساتھ ایسا کام ہوگیا کہ اس نے خوابوں میں بھی نہیں سوچا ہوگا

گھر کے اندر چور گھس آیا اور اندر اکیلی خاتون، پھر چور کے ساتھ ایسا کام ہوگیا ...
گھر کے اندر چور گھس آیا اور اندر اکیلی خاتون، پھر چور کے ساتھ ایسا کام ہوگیا کہ اس نے خوابوں میں بھی نہیں سوچا ہوگا

  

نیویارک(مانیٹرنگ ڈیسک) امریکی شہر شکاگو میں پولیس کے ہاتھوں گرفتاری سے بچنے کے لیے گھر میں گھسنے والے ملزم کو خاتون نے ایسی حالت میں گھر میں محبوس کر لیا کہ وہ آئندہ کسی گھر میں گھسنے کی ہمت نہیں کرے گا۔ ویب سائٹ clickondetroit.com کی رپورٹ کے مطابق شکاگو کے علاقے ڈبلیو ہورون میں ملزم ایک پارکنگ کے باہر ادھر ادھر گھوم رہا تھا اور لوگوں کو چوری شدہ کریڈٹ کارڈز فروخت کر رہا تھا۔ پولیس کے آنے پر وہ وہاں سے بھاگ کھڑا ہوا۔ پولیس نے بھی اس کا تعاقب کیا۔ کچھ فاصلے پر وہ صوفیہ ہرون نامی خاتون کے گھر میں گھس گیا اور اسے محبوس بنانے کی کوشش کی، لیکن الٹا خاتون نے اسے ہی محبوس کر لیا۔

رپورٹ کے مطابق ملزم کچن میں صوفیہ کے پاس گیا اور اسے کہا کہ اب تم آزادی سے ادھر ادھر نہیں جا سکتی۔ اس پر خاتون نے اسے کہا کہ ”اپنے کپڑے اتارو اور صرف زیرجامے کے ساتھ اس کونے میں بیٹھ جاﺅ، کیونکہ ہم دونوں ایک دوسرے کو یرغمال بنانے جا رہے ہیں۔چنانچہ صوفیہ نے ملزم کو 2گھنٹے تک اسی حالت بھی بٹھائے رکھا۔ دو گھنٹے بعد اس کا شریک حیات گھر آگیا جس نے ملزم کو گھر سے باہر نکالا۔ یوں وہ دونوں ایک دوسرے کی یرغمالی سے آزاد ہوئے۔ اس کے بعد صوفیہ نے اس واقعے کی پولیس کواطلاع کی۔ملزم تاحال مفرور ہے۔اس کے حلیے کے متعلق بتایا گیا ہے کہ وہ 20سے 25سال کا نوجوان اور 6فٹ 2انچ قد کا مالک ہے۔ اس کا وزن 180پاﺅنڈز کے لگ بھگ ہے۔ پولیس نے شہریوں سے درخواست کی ہے کہ وہ اسے کہیں دیکھیں تو فوری طور پر پولیس کو اطلاع دیں۔

مزید :

ڈیلی بائیٹس -