تحصیلداروں کے تیار کردہ دورہ انتقال کیلئے مانیٹرنگ سسٹم فعال کرنے کا حکم

تحصیلداروں کے تیار کردہ دورہ انتقال کیلئے مانیٹرنگ سسٹم فعال کرنے کا حکم

لاہور (اپنے نمائندے سے) بورڈ آف ریونیو پنجاب نے تحصیلداروں کی جانب سے تیار کردہ دورہ انتقالات کیلئے مانیٹرنگ سسٹم فعال کرنے کا حکم دیدیا ہے اسسٹنٹ کمشنر صاحبان دورہ انتقال کی نگرانی کریں گے اور دورہ انتقال کے ایک روز بعد تحصیلداروں سے پرت سرکار انتقال وصول کر کے تحصیل آفس میں جمع کروائیں گے مزید معلوم ہوا ہے کہ ضلع لاہور میں تعینات بااثر ریونیو افسران نئے نت طریقوں سے لوٹ مار کرتے اور رشوت وصولی کا بازار گرم کرتے ہوئے دکھائی دے رہے ہیں اور اختیارات کا بھرپور طریقے سے غلط استعمال کرتے ہوئے عوام الناس کو ذلیل و خوار کرنے پر بھی تلے ہوئے ہیں جس کا انکشاف اس وقت ہوا جب تحصیلدار صاحبان کے دورہ انتقال پروگرام کی انسپکشن کی گئی بورڈ آف ریونیو کی تشکیل کردہ انسپکشن ٹیم نے انکشاف کیا کہ بیشتر تحصیلدار صاحبان دورہ انتقالات میں 50 یا 100 انتقال کی انٹریاں تو ڈال دیتے ہیں مگر تصدیق کے مراحلے پر آ کر 20 سے 30 انتقال تصدیق کرتے ہیں اور باقیوں پر درمیانی حکم نامہ تحریر کرتے ہوئے پینڈنگ چھوڑ دیتے ہیں اس غیر قانونی پریکٹس کا مقصد بھی عوام الناس سے رشوت وصول کرنا بتا گیا ہے انسپکشن ٹیم ریونیو افسران کی یہ حرکتیں تحریری طور پر بورڈ آف ریونیو کے اعلیٰ افسران کے نوٹس میں لائی جس کے بعد بورڈ آف ریونیو کے ممبر جوڈیشل VI نے ہدایت کی ہے کہ تحصیلداروں کے دورہ انتقال کی باقاعدہ مانیٹرنگ کی جائے گی اور دورہ انتقالات پروگرام کی نگرانی اسسٹنٹ کمشنر صاحبان کریں گے۔

مزید : میٹروپولیٹن 1