عمران خان کو شہباز قلندر ؒ مزار کی انتظامیہ نے حاضری سے روکدیا

عمران خان کو شہباز قلندر ؒ مزار کی انتظامیہ نے حاضری سے روکدیا

سیہون (مانیٹرنگ ڈیسک) پاکستان تحریک انصاف کے سربراہ عمران خان کولعل شہباز قلندر ؒ کے مزار پر حاضری سے روک دیا گیا، مزار کی انتظامیہ نے مرکزی دروازے سمیت مزار کے تمام داخلی راستوں کو بند کردیا ، پولیس حکام کے مطابق عمران خان کے ذاتی محافظوں کو مسلح ہونے کی وجہ سے مزار کے اندر جانے سے روکا گیا۔تفصیلات کے مطابق چیئرمین تحریک انصاف سیہون میں جلسے سے خطاب کے بعد لعل شہباز قلندرؒ کے مزار پر حاضری دینے کیلئے پہنچے ، مزار کی انتظامیہ نے ان کی آمد سے قبل ہی تمام دروازے بند کر دئیے اور انہیں مزار کے اندر حاضری دینے سے روک دیااور ان کے وہاں سے چلے جانے کے بعد مزار کے دروازے کھول دئیے ۔ واقعہ کے بعد عمران خان کا کہنا تھا آصف زرداری پی ٹی آئی سے خوفزدہ ہیں اور تحریک انصا ف کی عوامی مقبولیت کے باعث پیپلز پارٹی بوکھلاہٹ کا شکارہوگئی ہے۔ پہلے جلسے کی اجازت دینے سے انکار کیا اور اب مزار کے اندر جانے سے بھی روک دیا گیا ہے، جو شرمناک فعل ہے۔ ہم تو احتراما درگاہ پر حاضری دینا چاہتے تھے۔دوسری جانب ڈپٹی کمشنر جامشور و نے اپنا ردعمل دیتے ہوئے کہا چیئرمین تحریک انصاف کو مزار کے اندر جانے سے نہیں روکا گیا بلکہ ان کیساتھ آنیوالے ذاتی محافظوں کو مزار کے اندر جانے سے روکا گیا ، کیونکہ مسلح افراد کے اندر جانے سے درگاہ کی بے حرمتی ہوتی ہے۔

عمران حاضری

مزید : صفحہ اول