قصور ویڈیو سکینڈل کیس،لاہورہائی کورٹ نے دوبارہ بیان ریکارڈ کرانے کی درخواست مسترد کر دی

قصور ویڈیو سکینڈل کیس،لاہورہائی کورٹ نے دوبارہ بیان ریکارڈ کرانے کی درخواست ...

لاہور(نامہ نگار خصوصی )لاہور ہائی کورٹ نے قصور ویڈیو سکینڈل سے متعلق دوبارہ بیان ریکارڈ کرانے کی درخواست مسترد کر دی۔

پنجاب حکومت کی56کمپنیوں میں 80ارب روپے کی کرپشن ،لاہورہائی کورٹ میں درخواست دائر

جسٹس انوار الحق نے مدعی شاہ زیب کی درخواست پر سماعت کی، شاہ زیب نے ٹرائل کورٹ میں دوبارہ بیان دینے کی درخواست کی تھی۔ تھانہ گنڈا سنگھ میں قصور ویڈیو سکینڈل سے متعلق ایف آئی آر درج کی گئی تھی، ایف آئی آر نمبر 201 می حسیم عامر، فیضان مجید سمیت 18 افراد کو نامزد کیا گیا تھا، ملزموں پر بداخلاقی ، بھتہ خوری اور بلیک میلنگ کے الزامات تھے انسداد دہشت گردی کی عدالت نے مقدمے سے دہشت گردی کی دفعات ختم کرکے مقدمہ سیشن عدالت قصور بھجوا دیا تھا۔

مزید : لاہور

لائیو ٹی وی نشریات دیکھنے کے لیے ویب سائٹ پر ”لائیو ٹی وی “ کے آپشن یا یہاں کلک کریں۔


loading...