بہاولنگر مصنوعی آپریشن کا انکشاف ، 500ارب کی سرمایہ کاری اراضی پر مافیا بد ستور قابض ، افسر با اثر لوگوں کو خش کرنے کیلئے متحرک

بہاولنگر مصنوعی آپریشن کا انکشاف ، 500ارب کی سرمایہ کاری اراضی پر مافیا بد ...

بہاولنگر(ڈسٹرکٹ رپورٹر )تجاوزات خاتمے پربہاولنگر کے تمام اسسٹنٹ کمشنرافسروں نے حکومتی احکامات کی دھجیاں اڑا دیں۔ضلع بھر میں 5سو ارب مالیت سے زائدکی سرکاری اراضی پر تجاوزات تاحال واگزار نہ ہوسکیں۔افسران اپنے اختیارات اور قانون کی بالادستی کی تلوار عام شہریوں پر چلا رہے ہیں ۔بہاولنگر ،ہارون آباد،فورٹ عباس،چشتیاں اور منچن آباد شہری اور مضافاتی علاقوں میں صوبائی حکومت اور ضلع حکومت کی سینکڑوں ایکٹر اراضی پر (بقیہ نمبر51صفحہ7پر )

سیاسی پشت پناہی والے بااثر افراد نے ناجائز قبضہ کرکے تجاوزات قائم کررکھی ہیں۔ محکمہ مال،صحت،انہار،سکول ایجوکیشن،کالج ہائیر ایجوکیشن،مسلم اوقاف،ہندواوقاف ،میونسپل کمیٹیزو بلدیہ،زرعی اصلاحات وزراعت ،لائیوسٹاک ،جوڈیشل کالونیزکی ملکیتی 5سو ارب روپے کے قریب سرکاری اراضی پربااثر افراد نے قبضہ کر رکھا ہے ۔بہاولنگر اور اس کی تحصیلوں میں تعینات اسسٹنٹ کمشنرز نے مقامی ن لیگی سیاستدانوں کو خوش کرنے کے لئے شہری علاقوں سے پختہ سمیت عارضی تجاوزات بھی ختم نہ کیں ہیں۔تجاوزات پرمضافاتی علاقوں سے ریڑھیوں اور تھڑوں کے خلاف مصنوعی آپریشن کی فوٹو گرافی کرکے 21کروڑ روپے مالیت کی اراضی واگزار کروانے پر بہاولنگرکی رپورٹ پنجاب حکومت کو ارسال کی گئی۔اسی طرح پنجاب حکومت کو ارسال کی جانے والی دوسری رپورٹ میں ضلع بھر کے رورل علاقوں سے 333ایکڑ،3کنال،15مرلے کی اراضی کو واگزارکروانے کا پلان بھیجوایا گیا ہے ۔واضح رہے کہ ضلع بھر کے مختلف رورل علاقوں میں جس اراضی کو واگزارکروانے کا انکشاف کیا گیا اس میں سے 200ایکڑ کے قریب سرکاری اراضی تاحال خالی پڑی ہے ۔مذکورہ اراضی پر تجاوزات بھی موجود نہ ہیں ۔ واضح رہے کہ ضلع کی سرکاری مشینری نے بہاولنگر،ڈھاباں،کھاٹاں،اڈا گجیانی،گلاب علی،ہارون آباد،موضع گودھی،کچھی والا،فقیروالی،فورٹ عباس،مروٹ،چولستان،ڈاہرانوالہ،چشتیاں،منڈی مدرسہ،نورسر،گھمنڈپور،چبیانہ،کبوتری،ٹوبہ قلندرشاہ،منچن آباد،میکلوڈ گنج،منڈی صادق گنج کے شہری اور آبادی والے علاقوں میں سرکاری اراضی پر قائم تجاوزات کے خلاف آپریشن با اثر افرادکی ایماء پر تاحال شروع نہ ہوسکا ہے۔

500 ارب

مزید : ملتان صفحہ آخر