تحریک انصاف کے ساتھ وہی کام ہو گیا جو وہ آج تک دوسروں کے ساتھ کرتی تھی ،ڈی چوک پر ہزاروں لوگ جمع ہو گئے اور ۔۔۔

تحریک انصاف کے ساتھ وہی کام ہو گیا جو وہ آج تک دوسروں کے ساتھ کرتی تھی ،ڈی چوک ...
تحریک انصاف کے ساتھ وہی کام ہو گیا جو وہ آج تک دوسروں کے ساتھ کرتی تھی ،ڈی چوک پر ہزاروں لوگ جمع ہو گئے اور ۔۔۔

  


اسلام آباد (ڈیلی پاکستان آن لائن)وفاقی دارالحکومت اسلام آباد میں یوٹیلٹی سٹورز کارپوریشن کے ملازمین کا دھرنا دو روز سے جاری ہے ،مظاہرین نے مطالبات کی منظوری سے پہلے دھرنا ختم کرنے سے انکار کردیا ۔

یوٹیلٹی سٹورز کارپوریشن کے سیکڑوں ملازمین کا ڈی چوک اسلام آباد میں دھرنے کا آج دوسرا روز ہے۔ احتجاجی ملازمین نے رات بھی ڈی چوک میں گزاری۔ مظاہرین کا مطالبہ ہے کہ 5 ہزار سے زائد ملازمین عارضی ملازمت پر کام کر رہے ہیں جنہیں مستقل کیا جائے، دو سالوں سے تنخواہوں میں اضافہ نہیں کیا گیا۔ حکومت فوری طور پر تنخواہوں میں اضافہ یقینی بنائے۔ مظاہرین کا کہنا ہے کہ مطالبات نہ مانے گئے تو خار دار تاریں بھی انہیں پارلیمنٹ ہاوس جانے سے روک نہیں پائیں گی۔ گزشتہ روز یوٹیلیٹی سٹورز کارپوریشن کی نجکاری کے خلاف ہزاروں ملازمین نے اسلام آباد میں احتجاجی ریلی نکالی اور ڈی چوک میں دھرنا دیا تاہم انہیں پارلیمنٹ ہاوس جانے سے روک دیا گیا۔ حکومتی پالیسیوں کے خلاف ملک بھر سے آئے ملازمین ہیڈ آفس میں جمع ہوئے اور ریلی کی شکل میں ڈی چوک پہنچے اور نجکاری کے خلاف نعرہ بازی کی۔ادھر نجی نیوز چینل دنیا نیوز کے پروگرام ”نقطہ نظر “میں گفتگو کرتے ہوئے جنرل سیکرٹری یوٹیلٹی سٹورز کارپوریشن انور وقار نے کہاہے کہ تحریک انصاف کے رہنما نعیم الحق نے ہمیں بتایا ہے کہ ذوالقرنین خان نامی شخص عمران خان کے دوست ہیں ،ان کو یوٹیلٹی سٹورز کارپوریشن کے بور ڈ آف ڈائر یکٹر کا چیئر مین لگانے لگے ہیں۔ ان کا یوٹیلٹی سٹورز کارپوریشن کا کوئی تجربہ نہیں ہے اوروہ مڈل ایسٹ میں ایک الیکٹرونک کمپنی کے مالک ہیں اور چونکہ وہ عمران خان کے دوست ہیں شائد وہ ان کو نوازنا چاہ رہے ہیں۔ ہم نے ان سے کہا کہ یوٹیلٹی سٹور کارپوریشن حکومت سے تنخواہوں کی مد میں ایک روپیہ بھی نہیں لیتی بلکہ ہم خود کما کر اپنے ملازمین کوتنخواہیں دیتے ہیں۔

اس حوالے سے مائیکرو بلاگنگ ویب سائٹ ٹوئٹر پر غریدہ فاروقی نے کہا کہ حکومت تو ٹال مٹول سے کام لے رہی لیکن میڈ یا مکمل کوریج سے گریزہ کیوں ؟مطالبات منظوری کے لیے دھرنے کی راہ تو خان صاحب نے ہی دکھائی تھی ۔

مزید : قومی