یو ای ٹی میں انرجی کنزرویشن پرتیسری انٹر نیشنل کانفرنس کا انعقاد،عالمی ماہرین کے تحقیقی مقالہ جات

یو ای ٹی میں انرجی کنزرویشن پرتیسری انٹر نیشنل کانفرنس کا انعقاد،عالمی ...
یو ای ٹی میں انرجی کنزرویشن پرتیسری انٹر نیشنل کانفرنس کا انعقاد،عالمی ماہرین کے تحقیقی مقالہ جات

  



لاہور(ڈیلی پاکستان آن لائن)یونیورسٹی آف انجینئرنگ اینڈ ٹیکنالوجی لاہورمیں سیراڈیوای ٹی اور PEECAکے باہمی اشتراک سے انرجی کنزرویشن پرتیسری سالانہ دوروزہ انٹر نیشنل کانفرنس کاانعقادکیا گیاجس میں ملکی اورغیرملکی ماہرین نےشرکت کی،کانفرنس میں انجینئرز،محققین،توانائی کے ماہرین،مینوفیکچررز اوربلڈنگ ڈیزائنرزکو ایک پلیٹ فارم پر اکٹھا کیا گیا تاکہ انرجی کی بچت اور تحفظ کی حکمت عملیوں کے تیزی سے بڑھتے ہوئے شعبے میں بات چیت اور تبادلہ خیال کیا جا سکے۔کانفرنس کا مقصد ماہرین اورطلباء کو ایک ساتھ لا کرایک مفید پروفیشنل اورایجوکیشنل نیٹ ورک بناناتھا۔مزید برآں کانفرنس میں انرجی ماڈلنگ،سمارٹ کنٹرول،قابل تجدید توانائی،لوڈ مینجمنٹ،مشترکہ ہیٹ اینڈ پاور،مؤثر عمارات کے ڈیزائن وغیرہ جیسے وسیع پیمانوں پر پاکستان کے تناظرمیں روشنی ڈالی گئی۔چیئرمین پنجاب ہائیر ایجوکیشن کمیشن پروفیسر ڈاکٹر فضل احمد خالد نے کانفرنس میں بطور مہمان خصوصی شرکت کی۔

کانفرنس کی افتتاحی تقریب سے خطاب کرتے ہوئے پروفیسر ڈاکٹر فضل احمد خالد نے کہا کہ توانائی پاکستان کے بڑے مسائل میں سے ایک ہے،توانائی بچانے اور اسے بہتر انداز میں محفوظ کرنے کیلئے یو ای ٹی کی جانب سے منعقد کی جانے والی کانفرنسز انرجی کے مسائل کو نا صرف اجاگر کرنے بلکہ ان کا حل تلاش کرنے کے حوالے سے بہت اہمیت کی حامل ہیں۔انہوں نے وائس چانسلر یو ای ٹی لاہورپروفیسر ڈاکٹر سید منصور سرور کے ہمراہ طلباء اور دیگر کمپنیوں کی جانب سے لگائے جانے والے سٹالز کا دورہ کیااور طلباء کی صلاحیتوں کی تعریف کرتے ہوئے انکے پراجیکٹس کو سراہا۔

اس موقع پر وائس چانسلر یو ای ٹی ڈاکٹر منصور سرور کا کہنا تھا کہ میں غیر ملکی ماہرین کا بہت مشکور ہوں کہ انہوں نے کانفرنس میں شرکت کی اور پاکستان آئے،یہ یونیورسٹی کے اساتذہ اور طلباء کیلئے بہت بڑا موقع ہے کہ ان کےعلم اورتجربے سےمستفید ہوتے ہوئے اپنی صلاحیتوں کابھر پور انداز سے اظہار کر سکیں۔کانفرنس کے آغاز پرالخوارزمی انسٹیٹیوٹ آف کمپیوٹر سائنس کے ڈائریکٹر ڈاکٹر وقار نے کانفرنس کے مقاصد بیان کرتے ہوئے کہا کہ ہماری یہ ہمیشہ سے کوشش رہی ہے کہ انڈسٹری اور تعلیمی اداروں کے درمیان پل کا کردار ادا کریں اور اس کے ساتھ ساتھ اسطرح کی کانفرنس کا انعقاد اس بات کو یقینی بناتا ہے کہ طلباء مختلف اداروں میں ہونے والی تحقیق اور صنعتی تقاضوں کے حوالے سے اپنے علم اور تجربے کو بروئے کار لا سکیں۔تقریب میں انٹرنیشنل سکالرز نے انرجی کے حوالے سے اپنے تحقیقی مقالہ جات بھی پڑھے۔اس موقع پر ایک صنعتی نمائش کا بھی انعقاد کیا گیا جس میں توانائی کے حوالے سے مختلف صنعتوں نے اپنے اپنے سٹالز لگائے۔افتتاحی تقریب کے احتتام پر وائس چانسلر نے انٹرنیشنل سکالرز کو یادگاری شیلڈز سے نوازا،یہ کانفرنس دو دن تک جاری رہے گی اور اس کے مختلف سیشنز میں لوگ اپنے تحقیقی مقالہ جات بھی پیش کریں گے۔

مزید : علاقائی /پنجاب /لاہور