پاکستانی ہائی کمیشن برطانیہ کی جانب سے ’روشن ڈیجیٹل اکاونٹ‘کے اقدام پر ویبنار کا اہتمام 

پاکستانی ہائی کمیشن برطانیہ کی جانب سے ’روشن ڈیجیٹل اکاونٹ‘کے اقدام پر ...
پاکستانی ہائی کمیشن برطانیہ کی جانب سے ’روشن ڈیجیٹل اکاونٹ‘کے اقدام پر ویبنار کا اہتمام 

  

لندن(مجتبیٰ علی شاہ )پاکستانی ہائی کمیشن برطانیہ نے حکومت پاکستان کے "روشن ڈیجیٹل اکاونٹ" (آر ڈی اے) کے اقدام پر ایک ویبنار کا اہتمام کیاجس سے گورنر اسٹیٹ بینک آف پاکستان ڈاکٹر رضا باقر ، ہائی کمشنر معظم احمد خان اور ڈپٹی گورنر نے خطاب کیا۔ وزیر تجارت شہزاد شفیق کی میزبانی میں ہونے والے بینار میں برطانوی ممبران پارلیمنٹ ، بینکرز ، سی ای اوز ، مالیاتی ماہرین اور کاروباری افرادسمیت 100افراد نے شرکت کی ۔

اس موقع پر گورنر اسٹیٹ بینک آف پاکستان نے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ حکومت پاکستان کے آر ڈی اے اقدام کا مقصد تارکین وطن کو اپنی ترسیلات زر کی سہولت فراہم کرکے پاکستان سے مالی طور پر منسلک کرنا ہے۔ آر ڈی اے کی انوکھی خصوصیات کے بارے میں بات کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ یہ معیارات پر سمجھوتہ کیے بغیر ضابطے میں لچک پیش کرتا ہے اور بغیر کسی اجازت کے کسی بھی وقت کسی بھی رقم کی ترسیل کی مکمل آزادی کی اجازت دیتا ہے۔ انہوں نے شرکاکو بتایا کہ اسٹیٹ بینک آف پاکستان بیرون ملک مقیم پاکستانیوں کی سہولت کے لئے اس طرح کے مزید اقدامات متعارف کرانے کا ارادہ رکھتا ہے۔

ہائی کمشنر نے اپنے ریمارکس میں روشن ڈیجیٹل اکاونٹ کو حکومت پاکستان کا ایک قابل ذکر اقدام قرار دیا جو نہ صرف بیرون ملک مقیم پاکستانیوں کی طویل التوا کا مطالبہ پورا کرتا ہے بلکہ اس سے پاکستان میں ترسیلات زر اور سرمایہ کاری کو راغب کرنے میں بھی بہت لمبا فاصلہ طے ہوگا۔ انہوں نے کہا کہ اس اقدام سے بینکاری خدمات کی مکمل حدود فراہم کرکے پاکستانی لوگوں کو پاکستانی بینکاری اور ڈیجیٹل ادائیگیوں کے نظام میں ضم کیا جائے گا۔

ڈاکٹر مرتضیٰ سید ، نائب گورنر اسٹیٹ بینک نے روشن ڈیجیٹل اکاونٹ کی اہم خصوصیات اور فوائد کے بارے میں ایک تفصیلی پیش کش کی۔ مسٹر ذوالفقار کھکھڑ ، ہیڈ آف پاکستان ترسیلات زر اقدامات نے بھی اس اقدام کے تحت ترسیل دہندگان / فائدہ اٹھانے والوں کے وسیع پیمانے پر فوائد کے بارے میں بات کی۔

مزید :

برطانیہ -