سپریم کورٹ نے فردوس عاشق اعوان کو بڑی مشکل میں ڈال دیا

سپریم کورٹ نے فردوس عاشق اعوان کو بڑی مشکل میں ڈال دیا
سپریم کورٹ نے فردوس عاشق اعوان کو بڑی مشکل میں ڈال دیا

  

اسلام آباد (ڈیلی پاکستان آن لائن)سپریم کورٹ نے تحریک انصاف کی رہنما فردوس عاشق اعوان کے خلاف توہین عدالت کی کارروائی شروع کرنے کا فیصلہ کر لیا۔سپریم کورٹ کی جانب سے جسٹس قاضی فائز عیسیٰ کے خلاف صدارتی ریفرنس مسترد کیے جانے کے حوالے سے تفصیلی فیصلہ جاری ہوا۔جسٹس عمر عطا بندیا ل کی جانب سے 244صفحات پر مشتمل فیصلہ جاری کیا گیا جس میں کہا گیا کہ فردوس عاشق اعوان نے جسٹس قاضی فائز عیسیٰٰ کے خلاف ریفرنس کے حوالے سے فردوس عاشق اعوان کی پریس کانفرنس کا برا تاثر گیا ،فردو عاشق اعوان نے ریفرنس کی معلومات کو سیاسی فائدے کے لیے استعمال کیا ۔فیصلے میں کہا گیا کہ فردوس عاشق اعوان نے پریس کانفرنس میں حاضر سروس جج کے خلاف تضحیک آمیز الفاظ استعمال کیےجو بظاہرتوہین عدالت ہے ،فردوس عاشق اعوان نے آرٹیکل 204کی خلاف ورزی کی ،ان کے خلاف توہین عدالت کی کارروائی شروع کی جائے اور انہیں توہین عدالت کا جواب دہ کیا جائے ۔فیصلے میں کہا گیا کہجسٹس قاضی فائز عیسیٰ نے ریفرنس کی تیار ی میں فردوس عاشق اعوان پر کوئی الزام نہیں لگا یا 

مزید :

قومی -