اصل ذمہ دار امریکہ ہے،گستاخ فلم کے خلاف برطانیہ میں مظاہر ہ،اورمذمت

اصل ذمہ دار امریکہ ہے،گستاخ فلم کے خلاف برطانیہ میں مظاہر ہ،اورمذمت
اصل ذمہ دار امریکہ ہے،گستاخ فلم کے خلاف برطانیہ میں مظاہر ہ،اورمذمت

  


 لندن (بیورورپورٹ) برمنگھم سٹی سینٹر میں گستاخ امریکی فلم کے خلاف مسلم کمیونٹی،انگریزوں اور دیگر مذاہب سے تعلق رکھنے والوں نے احتجاجی مظاہرہ کیا اور امریکہ سے مطالبہ کیا کہ امریکی حکومت گوگل اور یو ٹیوب سے گستاخانہ فلم کو فوری طورپر ہٹائے نفرت انگیز فلم بنانے والوں کیخلاف فوری اور سخت کارروائی کرے اور دنیا بھر میں بسنے والے ایک بلین سے زائد مسلمانوں کے احساسات ، دینی عقائد کا احترام کرے، مظاہرے کا اہتمام لیبر پارٹی واشوڈ ہیتھ کے چیئرمین پہلوان چوہدری کرامت حسین، واشوڈ ہیتھ یوتھ فورم اور بنگلہ دیش یوتھ کے نوجوانوں نے کیا مظاہرے میں پاکستان ،بنگلہ دیش اورعرب ممالک کی خواتین ،بچے اور نوجوانوں کے علاوہ مختلف ممالک سے تعلق رکھنے والے غیر مسلم اور مذاہب کو نہ ماننے والے لوگ بھی شامل تھے، جنہوں نے توہین مذہب کی واضح اور بھرپور مذمت کرتے ہوئے کہا کہ کسی کو یہ حق حاصل نہیں ہے کہ وہ کسی بھی مذہب یا عقیدے کی توہین کرے اور کروڑوں انسانوں کو دکھ پہنچائے مظاہرین سے خطاب کرتے ہوئے جارج گیلوے کی جماعت ریسپکٹ پارٹی کے ایک انگریز نمائندے نے کہا کہ امریکہ دنیا میں یہ ظاہر کرتا ہے کہ وہ مذہب اور خدا پریقین رکھتا ہے لیکن حقیقت یہ ہے کہ امریکہ ہمیشہ اسلام اور دیگر مذاہب کو اپنے مذموم مقاصد کیلئے استعمال کرتا ہے اور اصل میں امریکہ مذہب اور خدا کو نہ صرف مانتا نہیں ہے بلکہ مذاہب کی توہین اور مخالفت کے خلاف کبھی بھی کوئی قدم نہیں اٹھائے گا۔ انہوں نے کہا کہ وہ خود سیکولر خیالات کے حامل ہیں اور تمام مذاہب کا یکساں اور مساوی احترام کرتے ہیں لیکن انہیں مسلمانوں کے پیغمبر حضرت محمد ﷺکے بارے میں توہین آمیز فلم اور اسلام کا مذاق اڑنے کی بھونڈی اورگھٹیا جسارت سے نہ صرف دکھ پہنچ ہے بلکہ وہ اپنی تمام مصروفیات چھوڑ کر مظاہرے میں آئے ہیں، انہوں نے کہا کہ مسلمانوں کو چاہئے کہ اب وہ امریکہ سے کسی بھی قسم کی امید نہ رکھیں پوری دنیا کے مسلمان متحد اور ایک ہوکر اور پوری دنیا کی آزدی پسند ، جمہوری اور حریت پسند اقوام کے ساتھ مل کرا مریکہ کے خلاف جدوجہد کریں انہوں نے کہا کہ امریکہ کو یہ حق حاصل نہیں ہے کہ وہ اپنی طاقت اورقوت کے زور پر دنیا کی غریب اور کمزور اقوام کو اپنا غلام بنانے کی کوشش کرے اگر امریکہ کو مسلمانوں سے معمولی سی ہمدردی بھی ہوتی تو امریکی حکام فوری طور پر اس فلم کو بنانے والوں کے خلاف اقدام کرتے اور گوگل اور یو ٹیوب سے اس فلم کو الگ کردیتے لیکن امریکی حکومت نے جس کی فوجیں آج مسلمان ملکوں پر قبضے کرکے بیٹھی ہوئی ہیں اور جو مسلمانوں کے ملکوں سے تیل، معدنیات اور مال و دولت لوٹ رہا ہے، اس کے حکمران اس عظیم سانحے پر ٹس سے مس نہیں ہوئے ہم برمنگھم کے عوام اور تمام مذاہب کی جانب سے گستاخ فلم کو ایک گھٹیا، توہین آمیز، انسانوں کے درمیان نفرت، بد اعتمادی اور فساد پیدا کرنے کی گھنانی سازش سمجھتے ہیں اور اس تمام تر صورتحال کا واحد ذمہ دار حکومت امریکہ کو قرار دیتے ہیں۔

مزید : بین الاقوامی