پشاور دھماکے میں ہلاکتیں 83 ہو گئیں، ملک بھر میں فضاءسوگوار، شہر شہر احتجاجی مظاہرے اور ریلیاں

پشاور دھماکے میں ہلاکتیں 83 ہو گئیں، ملک بھر میں فضاءسوگوار، شہر شہر احتجاجی ...
  • پشاور دھماکے میں ہلاکتیں 83 ہو گئیں، ملک بھر میں فضاءسوگوار، شہر شہر احتجاجی مظاہرے اور ریلیاں
  • پشاور دھماکے میں ہلاکتیں 83 ہو گئیں، ملک بھر میں فضاءسوگوار، شہر شہر احتجاجی مظاہرے اور ریلیاں
  • پشاور دھماکے میں ہلاکتیں 83 ہو گئیں، ملک بھر میں فضاءسوگوار، شہر شہر احتجاجی مظاہرے اور ریلیاں
  • پشاور دھماکے میں ہلاکتیں 83 ہو گئیں، ملک بھر میں فضاءسوگوار، شہر شہر احتجاجی مظاہرے اور ریلیاں
  • پشاور دھماکے میں ہلاکتیں 83 ہو گئیں، ملک بھر میں فضاءسوگوار، شہر شہر احتجاجی مظاہرے اور ریلیاں
  • پشاور دھماکے میں ہلاکتیں 83 ہو گئیں، ملک بھر میں فضاءسوگوار، شہر شہر احتجاجی مظاہرے اور ریلیاں
  • پشاور دھماکے میں ہلاکتیں 83 ہو گئیں، ملک بھر میں فضاءسوگوار، شہر شہر احتجاجی مظاہرے اور ریلیاں

پشاور (مانیٹرنگ ڈیسک) پشاور دھماکے میں زخمی مزید 2 افراد دم توڑ گئے ہیں جس کے بعد دھماکے میں ہلاکتوں کی تعداد 83 ہو گئی ہے، دوسری جانب ملک بھر میں مسیحی برادری کی جانب سے پشاور دھماکوں کے خلاف احتجاجی مظاہرے اور ریلیاں جاری ہیں جن میں حکومت سے ذمہ داروں کے خلاف سخت کارروائی کا مطالبہ کیا جا رہا ہے۔ پشاور کے کمشنر صاحبزادہ انیس نے مزید دو ہلاکتوں کی تصدیق کر دی ہے اور بتایا ہے کہ دھماکوں میں زخمی ہونے والوں میں سے 2 افراد جانبر نہیں ہو سکے جس کے بعد ہلاکتوں کی تعداد 83 ہو گئی ہے۔ دوسری جانب کراچی، لاہور، پشاور، فیصل آباد، راولپنڈی سمیت ملک کے مختلف شہروں میں مسیحی برادری کی جانب سے احتجاجی مظاہروں اور ریلیوں کا سلسلہ جاری ہے۔ لاہور میں مسحی برادری کی جانب سے پریس کلب کے سامنے احتجاجی مظاہرہ کیا جا رہا ہے جس میں خواتین اور بچوں کی بڑی تعداد شامل ہے، احتجاجی مظاہرے کے باعث پریس کلب سے ملحقہ سڑکوں پر بدترین ٹریفک جام ہے جس کے باعث شہریوں کو شدید مشکلات کا سامنا ہے۔ شہر قائد میں مسیحی برادری کی جانب سے احتجاجی ریلی نکالی گئی جس میں شریک مظاہرین کو منتشر کرنے کیلئے پولیس کی جانب سے لاٹھی چارج شیلنگ کی گئی۔ پشاور میں جی ٹی روڈ پر احتجاجی مظاہرہ کیا گیا جہاں مظاہرین نے گاڑیوں پر پتھراﺅ شروع کر دیا اور متعدد گاڑیوں کے شیشے توڑ دیئے، پولیس کی جانب سے مظاہرین کو منتشر کرنے کیلئے لاٹھی چارج اور شیلنگ کی گئی۔

مزید : پشاور /اہم خبریں