قومی اسمبلی میں سانحہ پشاور پر مذمتی قرارداد متفقہ طور پر منظور

قومی اسمبلی میں سانحہ پشاور پر مذمتی قرارداد متفقہ طور پر منظور
قومی اسمبلی میں سانحہ پشاور پر مذمتی قرارداد متفقہ طور پر منظور

روزنامہ پاکستان کی اینڈرائیڈ موبائل ایپ ڈاؤن لوڈ کرنے کے لیے یہاں کلک کریں۔

اسلام آباد (مانیٹرنگ ڈیسک) قومی اسمبلی میں سانحہ پشاور پر مذمتی قرارداد متفقہ طور پر منظور کر لی گئی ہے جس میں کہا گیا ہے کہ پشاور میں چرچ پر حملہ صرف مسیحی برادری پر نہیں پوری قوم پر حملہ ہے، حکومت مساجد اور تمام عبادت گاہوں کی سیکیورٹی یقینی بنائے۔ سپیکر سردار ایاز کی زیر صدارت قومی اسمبلی کا اجلاس ہوا جس میں حکومتی رکن زاہد حامد نے سانحہ پشاور پر مذمتی قرارداد پیش کی جسے متفقہ طور پر منظور کر لیا گیا۔ قرارداد میں کہا گیا ہے کہ پشاور میں چرچ پر حملہ صرف مسیحی برادری پر نہیں پوری قوم پر حملہ ہے، خیبرپختونخواہ حکومت اسلام اور آئین کے مطابق اقلیتوں کے تحفظ کیلئے اقدامات کرے اور مساجد سمیت تمام عبادت گاہوں کی سیکیورٹی یقینی بنائے۔ قرارداد میں مزید کہا گیا ہے کہ سانحہ پشاور میں ملوث افراد کو قرار واقعی سزا دی جائے۔

مزید : اسلام آباد