ایک ہزارمزید سکولوں میں ابتدائی تعلیم پروگرام کے تحت کمرے بنائے جائنگے

ایک ہزارمزید سکولوں میں ابتدائی تعلیم پروگرام کے تحت کمرے بنائے جائنگے

  



لاہور(خبرنگار) پی سی ون کے تحت اگلے سال تک ایک ہزار سکولوں میں ارلی چائیلڈ ہوڈایجوکیشن کے تحت کمرہ جماعت بنائے جائیں گے ، پنجاب بھر کے ایک ہزار دو سو پچیس پرائمری سکولوں میں ای سی ای کمرہ جماعت تیار کئے جا چکے ہیں جس بناء پر سکولوں کا ماحول چائلڈ فرینڈلی ہوا اور ان سکولوں کی انرولمنٹ میں 12 فیصد سے زائد بہتری ہوئی اور 90فیصد ریٹینشن رہی ۔ یہ با ت پروگرام ڈائریکٹر ڈائریکٹوریٹ آف سٹاف ڈویلپمنٹ سعید رمضان نے ڈا ئریکٹو ریٹ آف سٹاف ڈویلپمنٹ کے زیر اہتما م ورلڈ بینک کے ای سی ای ڈی ارلی چائلڈ ہوڈ ایجوکیشن اور ورلڈ بینک ارلی لرننگ سسٹم پارٹنر شپ ریسرچ پروگرام کے تحت ایک روزہ سیشن سے خطاب کرتے ہوئے کی ۔اس موقع پر ورلڈ بینک کے ایجوکیشن مشن کی ٹیم لیڈر شہر زاد لطیف، ورلڈ بینک سے Amanda Devercelli), ای سی ای کنسلٹنٹ ورلڈ بینک Ella Humphry، ڈپٹی ڈائریکٹر کوالٹی ایشورنس اور ای سی ای کی فوکل پرسن فضہ علی، ڈپٹی ڈائریکٹر پلاننگ انیلہ حسن، سینئر سبجیکٹ اسپیشلست یاسمین وائیں، یونیسف پنجاب کی ہیڈ روبینہ ندیم ،پلان انٹر نیشنل سے امتیاز عالم، الف لیلی بک بس سوسائٹی سیدہ بصارت کاظمی اور دیگر شرکاء موجود تھے ۔ ورلڈ بینک سے Amanda Devercelli کا کہنا تھا کہ اس ورکشاپ کا مقصدابتدائے بچپن کی تعلیم اور ڈویلپمنٹ (ECED)کے بین ا لاقوامی طور پر تسلیم شدہ ضروری اجزاء جیسا کہ ٹیچر ٹریننگ، والدین کے تعاون اور بچوں کی غذائی ضروریات کے حوالے سے آگاہی کو پنجاب کے سکولوں میں پریکٹس کرنا ہے۔کیونکہ ورلڈ بینک کی جانب سے کی گئی ریسرچ کے مطابق وہ بچے جنہوں نے ابتدائے بچپن کی تعلیم حاصل کی تھی ان کی ریاضی میں کارکردگی ان بچوں کی نسبت 40فیصد بہتر تھی جنہوں نے ابتدائے بچپن کی تعلیم حاصل نہیں کی تھی۔ ان کے شرکاء نے ای سی ای کے حوالے سے اپنے تجربات کو مد نظر رکھتے ہوئے کئی سفار شات پیش کیں۔

مزید : میٹروپولیٹن 1


loading...