مسئلہ کشمیر اقوام متحدہ میں کیوں اْٹھایا ؟ بھارت آگ بگولہ ، جنگی تیاریاں تیز ، انتہا پسند ہندو تنظیم نے نواز شریف کے سر کی قیمت لگا دی

مسئلہ کشمیر اقوام متحدہ میں کیوں اْٹھایا ؟ بھارت آگ بگولہ ، جنگی تیاریاں تیز ...

  



نئی دہلی (مانیٹرنگ ڈیسک) وزیر اعظم پاکستان کے اقوام متحدہ میں خطاب کے بعد بھارت کا گھناؤنا چہرہ بے نقاب ہوا تو بھارت کی عقل بھی جواب دے گئی۔ سفاک بھارت کی حقیقت دنیا کے سامنے آئی تو نام نہاد جمہوریت کی گھگھی بندھ گئی۔پاکستان نے سچ بولا تو مودی سرکار کو آگ لگ گئی۔ سفارتی میدان میں مار پڑی تو سوئی جنگ پرجا اڑی۔ مودی اور اس کے حواریوں نے نئی دہلی کے وارروم میں سر جوڑ لئے۔ پاکستان کے اندر سرجیکل سٹرائیک پر مشورے بھی کئے گئے۔ اجیت ڈوول اور فوجی سربراہوں نے بھارتی وزیراعظم کو ہلا شیری دی۔ نقشوں کی مدد سے اہداف کی نشاندہی بھی کی جبکہ کئی بھارتی سیکیورٹی ماہرین نے کسی بھی قسم کی جارحیت سے باز رہنے کی تجویز دیدی ،بی بی سی کے مطابق مقبوضہ کشمیر کے اگلے مورچوں پر تازہ کمک اور اسلحہ بارود پہنچانے کاکام شروع کردیا گیا ہے، بوفورس توپوں اور 105 درمیانی رینج کی دوسری توپوں کو اڑی کے چڑی میدان، موہرا اور بونیار میں نصب کیا جا رہا ہے۔بی بی سی کے مطابق مقبوضہ کشمیر میں بھارتی فوج نے کئی جگہوں پر بھاری اور درمیانے درجے کے ہتھیار اگلے مورچوں پر پہنچانا شروع کر دیے ہیں،جہاں سے پاکستانی زیر انتظام کشمیر مِیں پاکستان کی دفاعی تنصیبات کو نشانہ بنایا جاسکتا ہے،لائن آف کنٹرول پر بھارتی فوج کی طرف سے بھاری اور درمیانے توپے خانے کی نقل و حرکت کی بھارت کے اعلیٰ دفاعی اہلکاروں نے بی بی سی سے بات چیت میں تصدیق کی۔تاہم بھارتی فوج کے مطابق یہ موسم سرما شروع ہونے اور برف پڑنے سے پہلے اس کی ہر سال کی معمول کی تیاریوں کا حصہ ہے۔ لیکن اس مرتبہ کی تیاری میں کسی بھی صورت حال سے نمٹنے کے لیے کنٹرول لائن پر بوفورس توپوں، اور دیگر طرح کا جنگی ساز و سامان سرحد پر تعینات کیا جا رہا ہے۔ دوسری جانب بھارت کی انتہاء پسند سیاسی پارٹی’کرانتی دل‘ نے پاکستان کے وزیراعظم نوازشریف کے سرکی قیمت مقرر کردی ہے اور اعلان کیا ہے کہ جو بھی سرکاٹ کر لائے گا، اسے ایک کروڑ روپے انعام دیاجائے گا۔ہندی ٹی وی چینل ’آج تک‘ کے مطابق راشٹریہ ہندوکرانتی دل نے اعلان کیا ہے کہ نوازشریف کا سرکاٹ کر لاؤ، ایک کروڑروپے پاؤ۔موصوف نے یہ بھی دعویٰ کیا ہے کہ نواز شریف دہشتگردوں کو مدد فراہم کرتے ہیں اور بھارت کو بھی سیاسی و مذہبی تفریق سے بالا تر ہو کر پاکستان کو منہ توڑ جواب دینا چاہیے۔

آگ بگولہ

نئی دہلی (آئی این پی )بھارتی سرکار اور میڈیا وزیراعظم نوازشریف کے کشمیریوں پر بھارتی مظالم کا پردہ چاک کرنے پر بلبلا اٹھا،بھارتی میڈیا نے پاکستان کے ساتھ چین کو بھی نہ بخشا اورکہا کہ پاکستان بھارت میں جو دہشت گردی کررہا ہے اسے اْس پر چین کی حمایت حاصل ہے۔تفصیلات کے مطابق وزیراعظم نوازشریف نے اقوام متحدہ کی جنرل اسمبلی میں کشمیریوں پر بھارتی مظالم کا پردہ چاک کیا تونہ صرف بھارتی حکام بلبلا اٹھے بلکہ اْس کے میڈیا نے تو پاکستان اوروزیراعظم نوازشریف کے خلاف اگلنا شروع کردیا۔ اقوام متحدہ کی جنرل اسمبلی کے سالانہ اجلاس سے خطاب کے دوران وزیر اعظم نواز شریف نے جب مقبوضہ کشمیر میں ڈھائے جانے والے بھارتی مظالم کا تذکرہ کیا تو جنگی جنون میں مبتلا بھارت پاکستان کو دہشت گرد قرار دینے کے جتن کرنے لگا، وزیر اعظم نواز شریف کے خطاب کے بعد اقوام متحدہ میں بھارتی مشن کے سیکرٹری اول انعام گھمبیر نے کشمیر پر ریاستی جبر سے آنکھیں چراتے ہوئے کہا کہ انسانی حقوق کی خلاف ورزی سے بڑی قسم دہشت گردی ہے اور جب دہشت گردی کو ریاستی پالیسی کی حیثیت سے اختیار کیا جاتا ہے تو وہ بدترین جنگی جرائم میں شمار ہوتی ہے۔ انعام گھمبیر نے مزید زہر اگلتے ہوئے کہا کہ بھارت کی نظر میں پاکستان ایک دہشت گرد ملک ہے جو اپنے پڑوسی ملکوں کے خلاف دہشت گردوں کی ہر سال اربوں ڈالر امداد کرتا ہے جس سے دہشت گرد اپنے عزائم مکمل کرتے ہیں۔ بھارتی اینکروں کے منہ میں جو آیا وہ پاکستان کے خلاف زہراگلنے میں ایک دوسرے سے بازی لینے میں لگے رہے۔ بھارتی میڈیا نے پاکستان کے ساتھ چین کو بھی نہ بخشا اورکہا کہ پاکستان بھارت میں جو دہشت گردی کررہا ہے اسے اْس پر چین کی حمایت حاصل ہے۔

مزید : صفحہ اول


loading...