محرم الحرام کے دوران قیام امن،انتظامات کے سلسلے میں تیاریاں شروع

محرم الحرام کے دوران قیام امن،انتظامات کے سلسلے میں تیاریاں شروع

  



مظفرگڑھ،وہاڑی،بہاولپور(نما ئندگان)عشرہ محرم الحرام کے حوالے سے انتظامات اور امن و امان کو یقینی بنانے کے سلسلے میں جنوب پنجاب کے اضلاع میں کمشنرز اور ضلعی رابطہ افسران کی زیر صدارت گزشتہ روز بھی اجلاس منعقد ہوئے۔مظفرگڑھ سے سٹی رپورٹر کے مطابق عشرہ محرم الحرام کے دوران مجالس اور ماتمی جلوسوں کی سکیورٹی کے انتظامات کو فول پروف بنایا جائے گا، نیشنل ایکشن پلان کے تحت (بقیہ نمبر34صفحہ7پر )

ملک دشمن اور شر پسند عناصرسے آہنی ہاتھوں سے نمٹا جائے گا، یہ بات کمشنر ڈی جی خان محمد یثرب نے ڈی سی او آفس میں امن کمیٹی کے اجلاس کی صدارت کرتے ہوئے کہی، آر پی او رحمت اللہ نیازی، ممبران صوبائی اسمبلی حماد نواز ٹیپو، احمد یار ہنجرا، میاں محمد ذیشان گرمانی، خان محمد جتوئی ،مرتضیٰ رحیم کھر ، ڈی سی او شوکت علی اور ڈی پی او ملک اویس احمد بھی ان کے ہمراہ تھے ، کمشنر ڈی جی خان نے کہاکہ مستقل امن کیلئے ہم سب کو یکجہتی، ہم آہنگی،اخوت اور بھائی چارے کی فضا کو فروغ دیتے ہوئے دوسروں کو اس کو درس بھی دینا ہے تاکہ ہم ملک کی سلامتی ، بقا اور ترقی کیلئے متحد ہو سکیں، کمشنر نے کہا کہ ماتمی جلوسوں کے راستوں کی صفائی کو یقینی بنایا جائے، رات کے وقت لائٹس کا مناسب انتظام کیا جائے، سیوریج کے نظام کی بحالی کو یقینی بنایا جائے، گٹروں کے ڈھکن فی الفور لگائے جائیں، سٹرکوں ، نالیوں کی تعمیر و مرمت کے کام کو جلد سے جلد مکمل کیا جائے، اس سلسلے میں کسی قسم کی کوتاہی برداشت نہیں کی جائے گی، آر پی او ڈی جی خان رحمت اللہ نیازی نے اپنے خطاب میں کہا کہ اپنی صفوں سے ملک دشمن عناصر کو نکال باہر کرنا ہوگا، اپنے علاقے کی فضا کو پر امن بنانے کیلئے اپنا مثبت کردار ادا کرنا ہے، اتحاد و یکانگت کا عملی مظاہرہ کرنا ہے ، تمام اختلافات کو بالائے طاق رکھ کر ملک کی تعمیر و ترقی سوچ کو پروان چڑھانا ہے، قبل ازیں ڈی سی او مظفرگڑھ شوکت علی نے بریفنگ دیتے ہوئے بتایا کہ ضلع بھر میں تمام مجالس اور جلوسوں کو سکیورٹی فراہم کرنے کیلئے پلان ترتیب دیا جاچکا ہے، ضلع بھر میں 1237مجالس اور جلوس نکالے جائیں گے، جن میں77مقامات حساس نوعیت کے ہیں اور15فلش پوائنٹ ہیں، 22علماء و ذاکرین کے خطاب اور 24علماء و ذاکرین کی ضلع کی حدود میں داخلے پر پابندی عائد کردی گئی ہے، ضلعی اور تحصیل سطح پر کنٹرول روم قائم کردئیے گئے ہیں، ممبران صوبائی و قومی اسمبلی اور یو سی چیرمینوں کو رابطے میں رکھا گیا ہے، ریسکیو 1122اور محکمہ صحت کے افسران اور اہلکاروں کو کسی بھی ہنگامی صورتحال سے نمٹنے کیلئے پابند بنایا گیا ہے، جس کیلئے تمام انتظامات مکمل کرلئے گئے ہیں، حساس مقامات اور جلوسوں کے راستوں پر سی سی ٹی وی کیمرے نصب کئے جارہے ہیں، جس کو آن لائن کیا جائے گا، ڈی پی او ملک اویس احمد نے بتایا کہ ضلع میں مجالس او رجلوسوں کی سکیورٹی کیلئے 2200پولیس اہلکاروں کو تعینات کیا گیا ہے جن میں100ایلیٹ فورس کے جوان شامل ہیں، روٹس کی صفائی اور تلاشی کو یقینی بنایا جائے گا، حساس مقامات پر واک تھرو گیٹ نصب کئے جائیں گے ، مجالس او جلوسوں سے قبل عملہ کو تعینات کیا جائے گا، اس موقع پرممبران صوبائی اسمبلی حماد نواز ٹیپو، احمد یار ہنجرا، میاں محمد ذیشان گرمانی، خان محمد جتوئی اور مرتضیٰ رحیم کھر نے اپنے خطاب میں کہا کہ ، ضلع کو پر امن بنانے کے لئے ہم سب ایک پیج پر ہیں ،قیام امن کیلئے ضلعی انتظامیہ اور پولیس سے ہر ممکن تعاون کیا جائے گا، اجلاس سے مولانا عبدالغنی ثاقب، اختر بخاری، فیاض نسیم، مولانا حبیب اللہ، شیخ ابوہریرہ، مولانا حسین احمد مدنی، امیر حسن ، گلزار عباس نقوی اور مولانا عبدالمعبودآزاد نے خطاب کیا اور ضلع میں مستقل قیام امن کیلئے اپنے بھر پور تعاون کی یقنی دھانی کراتے ہوئے کہا کہ ضلعی انتظامیہ کی طرف سے عشرہ محرم الحرام کے دوران امن کے قیام کیلئے کئے گئے انتظامات قابل تحسین ہیں ، انہوں نے اس سلسلے میں مختلف مسائل کے نشان دہی بھی او ر ان کے حل کیلئے اپنی اپنی تجاویز بھی پیش کیں، اجلاس میں اے سی مظفرگڑھ ڈاکٹر سیف اللہ بھٹی، اے سی کوٹ ادو محمداختر، ڈی او سی شہزاد مگسی، شاکر مسیح سمیت ممبران امن کمیٹی اور انجمن تاجران کے عہدیدار نے شرکت کی۔وہاڑی سے بیورو رپورٹ اور نامہ نگار کے مطابق ایڈمنسٹریٹر ٹی ایم اے وہاڑی تنویرالرحمن نے کہا ہے کہ محرم الحرام کے دوران امن وامان قائم رکھنے کے لیے تمام ممکنہ اقدامات بروئے کار لائیں گے تمام مکاتب فکر تحمل برداشت اور رواداری کا عملی مظاہرہ کریں اور نادیدہ دشمن کے عزائم کو خاک میں ملائیں یہ بات انہوں نے ٹی ایم اے آفس میں تحصیل امن کمیٹی کے اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے کہی اجلاس میں اسسٹنٹ کمشنر سید آیف حسین شاہ ، ٹی ایم او میاں اظہر جاوید، ٹی او آر راؤ نعیم خالد،انچارج ڈسٹرکٹ ایمرجنسی ڈاکٹر محمد عابد، سول ڈیفنس آفیسر محمد یونس انجم،ممبران امن کمیٹی علامہ غلام قنبر عسکری ، حافظ حبیب الرحمن ، محمد انور، قاری حیات ،میاں ساجد آصف، عباس جعفری، ماسٹر ریاض مسیح اور دیگر ممبران شریک تھے۔اجلاس میں ممبران امن کمیٹی نے یقین دلایا کہ انتظامیہ سے ہر ممکن تعاون کیا جائیگا۔بہاولپور سے بیورو رپورٹ کے مطابق ڈسٹرکٹ کوآرڈینیشن آفیسر ڈاکٹر احتشام انور مہار نے کہا کہ ملک میں امن و امان کے قیام کیلئے ضروری ہے کہ ملک میں رواداری، ہم آہنگی ، بھائی چا رہ اور اتحاد و یگانگت کی فضا ء کو فروغ دیا جائے ۔وہ اپنے دفتر کے کمیٹی روم میں بین المذاہب ہم آہنگی کمیٹی کے اجلاس سے خطا ب کر رہے تھے۔ اس موقع پر اراکین اسمبلی ڈاکٹر سید وسیم اختر ، خالد محمود ججہ ، علامہ محمد ریاض احمد اویسی ، کرنل (ر) سید شفیق احمد، سردار طفیل ، قادر ندیم جوزف ، لالہ اجمل لعل بھیل ، قائم مقام ڈی پی او غلام مرتضیٰ بھٹو، ڈی او سی امجد بشیر ، ایس پی سپیشل برانچ ساجد حسن اور دیگر متعلقہ محکموں کے افسران موجو د تھے۔ ایم پی اے ڈاکٹرسید وسیم اختر نے اپنے خطا ب میں کہا کہ کو ئی مذہب انتہا پسندی اور دہشت گردی کی تعلیم نہیں دیتا بلکہ امن کی بات کر تا ہے ۔ اسلام رواداری اور بھائی چارہ اور امن و امان کے قیام کا درس دیتا ہے ۔ ایم پی اے خالدمحمود ججہ نے خطاب کر تے ہو ئے کہا کہ بین المذاہب ہم آہنگی کمیٹی تحصیل سطح پر تشکیل دی جائیں تاکہ آپس میں رواداری ،برداشت ، تحمل اور برد باری کا پیغام نچلی سطح تک پہنچ سکے۔ اجلاس میں علامہ محمد ریاض احمد اویسی ، کر نل (ر) سید شفیق احمد سردار طفیل اور فادر ند یم جوزف نے اپنے خطا ب میں اتحا د ، امن اور باہمی ہم آہنگی پر زور دیا ۔

مزید : ملتان صفحہ آخر


loading...