پرائمری سےیونیورسٹی تک تعلیمی نظام میں بہتری کے لئے کوشاں ہیں ،سول سوسائٹی، تعلیمی ماہرین اورمیڈیا اپناکردار ادا کرے :سید مراد علی شاہ

پرائمری سےیونیورسٹی تک تعلیمی نظام میں بہتری کے لئے کوشاں ہیں ،سول سوسائٹی، ...
پرائمری سےیونیورسٹی تک تعلیمی نظام میں بہتری کے لئے کوشاں ہیں ،سول سوسائٹی، تعلیمی ماہرین اورمیڈیا اپناکردار ادا کرے :سید مراد علی شاہ

  



کراچی (مانیٹرنگ ڈیسک) وزیراعلیٰ سندھ سید مراد علی شاہ نے کہا ہے کہ پرائمری سے لے کر یونیورسٹی کی سطح تک مجموعی تعلیمی نظام میں بہتری اور اس کے ساتھ ساتھ بورڈز کے امتحانات لینے اور ان کی جانب سے نتائج کے اجراء کو مزید مؤثر بنانے کیلئے بھی کوشاں ہیں، مجھے معلوم ہے کہ پبلک سیکٹر کے تعلیمی نظام میں متعدد مسائل ہیں مگر حکومت نظام کو بہتر بنانے کیلئے سخت اقدامات اٹھا رہی ہے۔

بہادرآباد میں منعقدہ سائنس نمائش میں میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ تعلیم کے شعبے میں ایمرجنسی لاگو کی گئی ہے جس کا مقصد یہ ہے کہ سرکاری شعبے میں چلنے والے اسکولز، کالیجز اوریونیورسٹیز کی کارکردگی کو بہتر بنا سکیں اور اس کے ساتھ ٹیچنگ اسٹاف کی کمیونیکیشن اسکلزکو بہتر بنانا ہوگا۔ انہوں نے مزید کہا کہ ہاں مجھے معلوم ہے کہ یونیورسٹیز،بورڈز اور ڈائریکٹوریٹ میں کچھ اہم آسامیاں خالی ہیں جن کو جلد پر کیا جائیگا، صرف ٹیچنگ اسٹاف کی باقاعدہ حاضری کافی نہیں بلکہ ان کی استعدادکار میں بہتری لانے کی بھی ضرورت ہے، ہم اساتذہ کی کارکردگی کے ساتھ ٹیچنگ کے عمل میں بہتری لانا چاہتے ہیں جس کیلئے سول سوسائٹی، تعلیمی ماہرین اورمیڈیا اپنا اہم کردار کر سکتا ہے۔ انہوں نے کہاکہ کسی زمانے میں این جے وی ٹاپ کلاس اسکول ہوتا تھا اور جہاں پر نامور سیاستدان، وکلاء مثلاً حفیظ پیرزادہ نے وہاں پر تعلیم حاصل کی اور اب ہم اس اسکول کی ماضی کی شاندار تعلیمی سرگرمیوں کی بحالی کیلئے کام کر رہے ہیں۔

مزید : کراچی


loading...