کاغذات واپس لینے کے باعث فاروق راجہ کا انتخابی نشان بیلٹ پیپر پر نہ چھپ سکا

کاغذات واپس لینے کے باعث فاروق راجہ کا انتخابی نشان بیلٹ پیپر پر نہ چھپ سکا

لاہور(نمائندہ پاکستان)حلقہ این اے120کے ضمنی الیکشن میں امیدوار فاروق راجہ کے انتخابی نشان بیلٹ پیپر پر شائع نہ کرنے کی الیکشن کمیشن کی جانب سے وضاحت کر دی گئی ہے۔الیکشن کمیشن پنجاب کے دفتر کی جانب سے ایسی تمام خبروں کی تردید کی گئی ہے کہ حلقہ این اے120 میں ایک امیدوار راجہ فاروق کا انتخابی نشان کیرم بورڈ الیکشن کمیشن بیلٹ پیپر پر چھاپنا بھول گیا ۔صوبائی الیکشن کمیشن کے دفتر نے اس بات کی وضاحت کی ہے کہ ایسی غلطی یا کوتاہی پیپر کی چھپائی کے دوران وقوع پذیر نہیں ہوئی ۔بلکہ راجہ فاروق کی طرف سے حلقہ این اے120کے ضمنی انتخاب میں اپنے کاغذات نامزدگی جمع کروانے کے بعد 8ستمبر2017 کو ریٹرننگ افسر کے دفتر میں کاغزات نامزدگی واپس لینے کی درخواست جمع کروائی گئی تھی۔جبکہ عوامی نمائندگی کے ایکٹ1976 کے سیکشن17 کے تحت امیدوار الیکشن ڈے سے چار روز قبل ریٹرننگ آفیسر کے پاس کاغذات نامزدگی واپس لینے کی درخواست جمع کروا سکتا ہے۔لہٰذا امذکورہ امیدوار پولنگ ڈے سے قبل اپنے کاغذات نامزدگی واپس لے چکا تھا جس کے بعد بیلٹ پیپر پر اس کا انتخابی نشان نہیں چھاپا گیا۔

مزید : میٹروپولیٹن 1