ورکنگ باؤنڈری پر فائرنگ ، گولہ باری ، پاک بھارت ڈی جی ایم اوز کا خصوصی ہاٹ لائن رابطہ

ورکنگ باؤنڈری پر فائرنگ ، گولہ باری ، پاک بھارت ڈی جی ایم اوز کا خصوصی ہاٹ ...

اسلام آباد، راولپنڈی(مانیٹرنگ ڈیسک ، نیوز ایجنسیاں) ورکنگ باؤنڈری پر بھارتی فوج کی فائرنگ اور معصوم شہریوں کی شہادتوں پر پاکستان نے بھارت سے شدید احتجاج کیا ہے جبکہ بھارتی فوج کی گزشتہ روز ورکنگ باؤنڈری پر بلا اشتعال فائرنگ اور گولہ باری کے نتیجے میں پاکستانی شہریوں کی شہادتوں کی تعداد 6اور زخمیوں کی تعداد بڑھ کر 26 ہوگئی ہے ۔دریں اثناء ڈائریکٹر جنرلز ملٹری آپریشنز کی سطح پر ہونیوالے خصوصی ہاٹ لائن رابطے کے دوران پاکستان نے بھارت پر واضح کر دیا ہے کہ پاک فوج اپنے شہریوں کی سلامتی یقینی اور کسی بھی جارحیت کو ناکام بنانے کیلئے تمام ضروری اقدامات اٹھاتی رہے گی ، سیز فائر کی خلاف ورزی دونوں ممالک کے درمیان اس حوالے سے طے شدہ سمجھوتے کی واضح خلاف ورزی ہے۔تفصیلات کے مطابق بھارتی اشتعال انگیزی پرگزشتہ روز پاکستان میں تعینات بھارت کے سفیر گوتم بمبا والا کو دفتر خارجہ طلب کرکے شدید احتجاج کیا گیا، قائم مقام سیکرٹری خارجہ اعتزاز احمد نے بھارتی ہائی کمشنر کواحتجاجی مراسلہ بھی حوا لے کیااور کہا بھارت کی جانب سے معصوم شہریوں پر فائرنگ عالمی قوانین کی خلاف ورزی ہے۔دریں اثنا ء آئی ایس پی آر کے مطابق پاکستان اور بھارت کے ڈائریکٹر جنرلز ملٹری آپریشنز کے درمیان خصوصی ہاٹ لائن رابطہ ہوا جس کے دوران پاک فوج کے ڈی جی ایم او کی طرف سے ورکنگ باؤنڈری کیساتھ رہائش پذیر پاکستانی شہریوں کو بھارتی فوجیوں کی جانب سے جان بوجھ کر نشانہ بنائے جانے کا معاملہ اٹھایا گیا ۔ پاکستان کی جانب سے بھارت کو بتایا گیا کہ سیز فائر کی خلاف ورزی اس معاملے پر موجود سمجھوتے کی واضح خلاف ورزی ہے بھارتی ڈی جی ایم او کو پاک فوج کی جانب سے اپنے شہریوں کی سلامتی یقینی بنانے کے غیر متزلزل عزم سے آگاہ کیا گیا اور بتایا گیا کہ پاک فوج مستقبل میں اس طرح کی کسی بھی جارحیت کو ناکام بنانے کیلئے تمام ضروری اقدامات اٹھاتی رہے گی۔

پاکستان احتجاج

مزید : صفحہ اول