حکمرانوں کی باتوں سے فساد ہوگا

حکمرانوں کی باتوں سے فساد ہوگا
حکمرانوں کی باتوں سے فساد ہوگا

  

کراچی (این این آئی) پاکستان پیپلز پارٹی پارلیمنٹرینز کے مرکزی سیکرٹری اطلاعات اور سابق وفاقی وزیرمولا بخش چانڈیو نے کہا ہے کہ ماڈل ٹاؤن رپورٹ سے نہیں بلکہ حکمرانوں کی باتوں سے فساد برپا ہوگا۔خصوصی بات چیت کرتے ہوئے مولا بخش چانڈیو نے کہا کہ پنجاب کے حکمرانوں کو کسی کی پرواہ نہیں وہ صرف اپنی مرضی کرتے ہیں، ان کو سپریم کورٹ، آئین اور قانون سے کوئی لینا دینا نہیں، ان کے پاس عجیب وغریب قوت ہے، یہ ضیاء الحق کے وارث ہیں جو فرقہ پرستی کو ہوا دیتے ہیں۔بینظیرقتل کیس کے فیصلے کے حوالے سے انہوں نے کہا کہ بینظیرقتل کیس میں قاتل کی نشاندہی نہیں ہوئی، قتل کیس میں صرف فرائض میں غفلت برتنے کے ذمہ داروں کو سزا ہوئی ہے، غفلت کس کے کہنے پرہوئی اس کی نشاندہی نہیں ہوسکی ہے۔انہوں نے کہا کہ بے نظیر قتل کیس کے فیصلے کو پیپلزپارٹی نے تسلیم ہی نہیں کیا، پوری پیپلزپارٹی بی بی کے قتل کا ذمہ دارپرویز مشرف کوسمجھتی ہے۔انہوں نے کہا کہ مشرف نے للکارنے پر آصف زرداری کا نام لیا ہے۔ ایک سوال کے جواب میں مولابخش چانڈیو نے کہا کہ تحریک انصاف کا بحران پیدا کرنے سواکوئی اور کام نہیں ہے۔

مزید : صفحہ آخر