قانون کی پاسداری کو یقینی بنایا جائیگا ،ڈی پی او ٹانک

قانون کی پاسداری کو یقینی بنایا جائیگا ،ڈی پی او ٹانک

ٹانک(نمائندہ خصوصی)محرم الحرام کے دوران امن و امان کو برقرار رکھنا پولیس کے اولین فرائض میں شامل ہے قانون کی پاسداری کو ہر حال میں یقینی بنایا جائیگا شیعہ اور سنی اکابرین قانون نافذ کرنے والے اداروں کے ساتھ تعاون کریں قانون شکنی کرنے والے عناصر ز کے خلاف آہنی ہاتھوں سے نمٹا جائیگا جلوسوں کی سیکورٹی کے لئے 1200سے زائد پولیس اہلکار فرائض سر انجام دیں گے جس کے لئے کھوجی کتوں کی بھی مدد لی جائے گی ان خیالات کا اظہار ڈسٹرکٹ پولیس آفسیر ٹانک شاہ نذر نے تھانہ مرید اکبر شہید میں محرم الحرام کے حوالے سے میڈیا کے نمائندوں سے بات چیت کرتے ہوئے کیا انہوں نے کہا کہ محرم الحرام ہمیں اخوت ،بھائی چارے اور برداشت کا درس دیتا ہے اور تمام مکاتب فکر سے تعلق رکھنے والے افراد پر ذمہ داری عائد ہوتی ہے کہ وہ بھائی چارے کی فضا کو فروغ دیں تاکہ محرم الحرام پر امن طور پر اختتام پذیر ہو سکے محرم الحرام کے دوران پولیس نے سخت سیکورٹی انتظامات اٹھائے ہیں اور ٹانک کے تمام تھلہ جات پر پولیس کی بھاری نفری تعینات کر دی گئی ہے شہر بھر میں ناکہ بندیوں پر چیکینگ کا سلسلہ شروع کر دیا گیا ہے اور باہر سے آنے والے مشتبہ افراد پر کڑی نظر رکھی جا رہی ہے انہوں نے کہا کہ ناکہ بندیوں پر اٹھائے جانیوالے سیکورٹی اقدامات کا مقصد شہریوں کے جان ومال کی حفاظت کو یقینی بنانا ہے اس لئے شہری پولیس کے ساتھ تعاون کریں انہوں نے کہا کہ ٹانک کے دیرپا امن کے لئے پولیس ،پاک آرمی اور ایجنسیاں مکمل طور پر رابطے میں اور ان کے درمیان بہترین کو آرڈنیشن پائی جاتی ہے انہوں نے کہا کہ عوام سے اپیل کی جاتی ہے کہ وہ اپنے آس پاس کے ماحول پر کڑی نظر کریں اور کسی بھی ایسے شخص کو مکان کرایہ پر نہ دیں جو شکل و صورت سے اجنبی لگتا ہے محرم الحرام کے دنوں میں کرایہ پر دئیے جانیوالے مکان کی اور کرایہ دار کی مکمل معلومات مقامی پولیس اسٹیشن میں جمع کرائیں۔

مزید : پشاورصفحہ آخر