پاکستان کو ورلڈ چیمپئن دیکھنا مری سب سے بڑی خواہش ہے :ناصر اقبال

پاکستان کو ورلڈ چیمپئن دیکھنا مری سب سے بڑی خواہش ہے :ناصر اقبال

پشاور(سپورٹس رپورٹر)پاکستان کے مایہ ناز سکواش کھلاڑی ناصر اقبال نے کہاہے کہ ان کی نظریں سکواش کے عالمی نمبر ون کے ٹائٹل پرہے جسکے لئے وہ دن رات بھر پور کوششیں کررہے ہیں، انشاء اللہ وہ دن دور نہیں جب اس ٹائٹل کو حاصل کرنے پاکستان کا نام دنیامیں روشن کرینگے،تاہم ان کی کامیابی سے بھارت کی نیندیں حرام ہوئی جسکے باعث انہوں نے ورلڈ سکواش فیڈریشن میں مجھ پر جھوٹے الزام لگاکر پابندی لگانے کی ناکام کوششوں میں مصروف ہے،سکواش فیڈریشن کو چاہئے کہ میرے کیس کی موثر اندازمیں دفاع کریں ،کیونکہ ملک کیلئے کھیلناچاہتاہوں اور پاکستان کوورلڈ چمپئن دیکھنامیری سب سے بڑی خواہش ہے ۔پشاور میں اپنی رہائش گاہ پر میڈیا سے گفتگوکرتے ہوئے ناصر اقبال نے کہاکہ وہ سپورٹس مین گھرانے میں پیداہواہے وہ ذہنی اور جسمانی طور پر فٹ ہیں قوت بخش ادویات کے استعمال کرنے کی انہیں کوئی ضرورت نہیں ہے ،سکواش میں میری رینکنگ میں تیزی سے بہترین آنے پر لوگ مجھ سے جھلسنے لگے بلکہ ہمسایہ ملک بھارت کوخوف ہونے لگااور انکی اشارے پر مجھے قوت بخش ادویات کے استعمال میں ملوث کرایاگیااور ایک متنازعہ ڈوپ ٹیسٹ کابہانہ بناکر بھارت سمیت تمام مخالفین مجھ پر پابندی لگانے کی ناکام کوششوں میں لگے ہیں،لیکن اسکے باوجود میں نے اپنی مددآپ کے تحت اپنے کوچ طاہر اقبال کی نگرانی میں امریکہ میں6ماہ تک ٹریننگ کا سلسلہ جاری رکھابلکہ ورلڈفیڈریشن کی اجازت سے مختلف انٹر نیشنل مقابلوں میں تواترکیساتھ حصہ لیا،جسکے باعث انکے کھیل میں مزید نکھار آگیا،بوسٹن اوپن کے ایونٹ میں ورلڈ ررینکنگ کے بہترین کھلاڑیوں کو ہرایاتاہم کوارٹرفائنل میں عالمی چمپئن کریم گواد سے شکست ہوئی ،جنہوں نے میچ کے بعد میری بھرپورحوصلہ آفزائی کرکے میرے کھیل کو سراہا۔ناصراقبال کوحیرانگی اس باتپرہے کہ 7کو ڈوب ٹیسٹ فازیٹیو اور10تاریخ کے ڈوب ٹیسٹ کا رزلٹ نگٹیو آتاہے ،اوراس متنازعہ ڈوب ٹیسٹ کو بنیاد بناکربھارتی فیڈریشن نے ورلڈفیڈریشن میں اعتراض کرتے ہوئے مجھے آؤٹ کرنے کی ناکام کوششیں شرو ع کردی ہیں، جو سپورٹس قوانین کیخلاف ہے۔ ایک سوال کے جواب میں بتایاکہ اتنے عرصے تک ورلڈسکواش فیڈریشن کیساتھ میری کیس کی موثراندازمیں دفاع نہ ہونے کی صورت میں اپناکیس اپنی مددآپ کے تحت لڑنے کیلئے سویٹزرلینڈمیں انٹرنیشنل کورٹس اپیل کردی ہے جسکے لئے کورٹس اورکیس کی پیروی کیلئے وکیل کے 10لاکھ روپیسے زائد تک کے اخراجات خودبرداشت کررہاہو ں،انہوں نے کہاکہ مجھے غلط طریقے سے پھنساگیاہے لیکن میراضمیرمطمئن ہیں انشاء اللہ سرخرورہوں گا،ناصراقبال نے کہاکہ پیسکوکے حکام نے مجھے بہت سپورٹ کیااورحوصلہ آفزائی کی ہے ۔

مزید : پشاورصفحہ آخر