16سالہ طالب علم کی خودکشی ، تحقیقات میں ایسا ہولناک انکشاف کہ تمام والدین کی پریشانی کی انتہاءنہ رہے

 16سالہ طالب علم کی خودکشی ، تحقیقات میں ایسا ہولناک انکشاف کہ تمام والدین کی ...
 16سالہ طالب علم کی خودکشی ، تحقیقات میں ایسا ہولناک انکشاف کہ تمام والدین کی پریشانی کی انتہاءنہ رہے

  

لندن(مانٹرنگ ڈیسک) برطانیہ میں چند ماہ قبل ایک 16سالہ طالب علم نے خودکشی کر لی تھی جس کی تحقیقات میں اب ایسا ہولناک انکشاف منظرعام پر آگیا ہے کہ سن کر تمام والدین کی پریشانی کی انتہاءنہ رہے۔ دی سن کے مطابق لوکس ویب نامی طالب علم کی خودکشی کا یہ افسوسناک واقعہ گزشتہ سال دسمبر میں پیش آیا تھا۔ برطانوی شہر کینٹربری کے رہائشی لوکس نے شہر کے مضافات میں واقع جنگل میں جا کر خودکشی کی اور دو روز بعد پولیس نے اس کی لاش وہاں سے برآمد کی۔

اب پولیس کی تحقیقات میں معلوم ہوا ہے کہ لوکس ویب نے خودکشی جیسا یہ انتہائی قدم ایک سوشل میڈیا گروپ کے اکسانے پر اٹھایا تھا۔ پولیس کے مطابق لوکس کے ذہن میں خودکشی کرنے کا خیال پہلے سے موجود تھا تاہم وہ اس حوالے سے کشمکش کا شکار تھا۔چنانچہ اس نے اپنے کلاس فیلوز کے ایک سوشل میڈیا گروپ میں اپنے خودکشی کرنے کا معاملہ رکھا اور کہا کہ وہ بہت ناخوش ہے اور خودکشی کرنا چاہتا ہے۔اپنی پوسٹ میں اس نے خودکشی کے کئی طریقے بھی بتائے۔گروپ کے دیگر لوگوں نے اس معاملے کو مذاق سمجھا اور اسے خودکشی پر اکسانے کی باتیں کرتے رہے۔ 

گروپ کے دیگر لوگوں کے مذاق کے جواب میں لوکس نے بتایا کہ وہ واقعی خودکشی کر لے گا۔ اس پر اس کے ایک کلاس فیلو نے اس معاملے پر اس کے ساتھ شرط بھی لگا لی اور لوکس نے اسے اگلے دن جنگل میں اسی جگہ سے آ کر اس کی لاش اٹھانے کا کہہ کر شرط لگا لی تھی۔ اگلے دن سکول میں طالب علم لوکس کی اس شرط کے متعلق بات کر رہے تھے جب ایک اور طالب علم نے سن کر اس واقعے سے ایک ٹیچر کو آگاہ کر دیا اور معاملہ پولیس کو رپورٹ کر دیا گیا۔

مزید :

برطانیہ -