متاثرہ علاقوں میں پیرا سٹامول کی فراہمی کو یقینی بنایا جائے، قومی اسمبلی قائمہ کمیٹی صحت 

متاثرہ علاقوں میں پیرا سٹامول کی فراہمی کو یقینی بنایا جائے، قومی اسمبلی ...

  

اسلام آباد(آئی این پی) قومی اسمبلی کی قائمہ کمیٹی برائے صحت میں ارکان ملک میں پیناڈول کی قلت کے خلاف پھٹ پڑے اور سیلاب سے متاثرہ علاقوں میں پیناڈول فراہم کرنے کا مطالبہ کر دیا جس پر کمیٹی نے حکومت کو سیلاب سے متاثرہ علاقوں کو پیراسٹامول کی فراہمی یقینی بنانے کی ہدایت کردی جبکہ ڈریپ حکام نے کمیٹی کو بتایا کہ پیراسٹامول اس وقت میسر ہے قیمت کامسئلہ تھا اس پر بحران پیدا ہوا،  بڑی جلدی یہ مسئلہ حل ہو جائے گا سپیشل سیکرٹری صحت نے کمیٹی میں انکشاف کیا کہ پاکستان میں اس وقت 9 لاکھ نرسوں کی کمی ہے قومی اسمبلی کی قائمہ کمیٹی برائے صحت کا اجلاس چیئرمین کمیٹی محمد افضل خان ڈھانڈلہ کی صدارت میں ہوا  اجلاس میں ارکان کمیٹی نے ملک میں پیناڈول کی کمی کا معاملہ اٹھایا، رکن کمیٹی رمیش لال نے کہا کہ پیناڈول نہیں ہے،  لاڑکانہ، سکھر، گھوٹکی اور  دادو  میں لوگ ایک پیناڈول کے لئے ترس رہے ہیں،لوگوں تک پیناڈول پہنچائی جائے،رکن کمیٹی زہرا ودود فاطمی نے کہا کہ پیراسٹامول نہیں مل رہی ہے،مجھے دے دیں تین مریض میر گھر میں  ہیں۔ رکن کمیٹی شازیہ ثوبیہ نے کہا کہ سیلاب والے علاقوں میں پیراسٹامول میسر ہونی چاہئے رکن کمیٹی ڈاکٹر درشن نے استفسار کیا کہ پیناڈول کیوں نہیں مل رہی؟ جس پر ڈریپ حکام نے کمیٹی کو بتایا کہ پیراسٹامول اس وقت میسر ہے، قیمت کا مسئلہ تھا اس پر بحران پیدا ہوا، پی ایم صاحب کے ساتھ بھی زوم پر میٹنگ ہوئی ہے بڑی جلدی یہ مسئلہ حل ہو جائے گا، ڈاکٹر درشن نے کہ کہ آپ بیٹھ کر معاملے کو حل کریں۔ رکن کمیٹی رمیش لال نے  سیکرٹری صحت کی عدم موجودگی پر اعتراض اٹھایا، چیئرمین کمیٹی نے کہا کہ آئندہ اجلاس میں سیکرٹری اور منسٹر تشریف لائیں جلاس میں پاکستان نرسنگ کونسل سے متعلق معاملہ بھی زیر بحث آیا سپیشل سیکرٹری صحت نے کمیٹی کو بتایا کہ پاکستان میں اس وقت 9 لاکھ نرسوں کی کمی ہے ہمیں مختلف ممالک سے درخواست آرہی ہے کہ ہمیں نرسز چاہئیں۔ 

قائمہ کمیٹی صحت

مزید :

صفحہ آخر -