ٹرانس جینڈربل، شیر گڑھ 2لڑکے نکاح کیلئے رجسٹرار آفس پہنچ گئے

ٹرانس جینڈربل، شیر گڑھ 2لڑکے نکاح کیلئے رجسٹرار آفس پہنچ گئے

  

    اوکاڑہ (نامہ نگار+بیورورپورٹ)شیرگڑھ میں دو لڑکے آپس میں نکام پڑھانے کے لئے رجسٹرار کے پاس پہنچ گئے، 20 سالہ صابر علی، 19 سالہ حماد کیساتھ باقاعدہ نکاح پڑھوانے کے لئے گواہ بھی ساتھ لے گیا  جس پر نکاح خوان نے بتایا کہ اسکے پاس تحریری طور پر کوئی ایسی دستاویز نہیں پہنچی یا شرعی عذر کی موجودگی میں وہ ایسا کرنے سے قاصر ہے تو تکرا ر اور شور واویلے پر اہل دیہہ بڑی تعداد میں اکٹھے ہو گئے۔صابر علی اور حماد علی کا موقف تھا کہ دونوں ایک دوسرے سے پیار کرتے ہیں، اسمبلی سے باقاعدہ قانون سازی کے بعد ریاستی قوانین کے عین مطابق ہم جنس پرستی کے قانون کی روشنی میں اب باقاعدہ نکاح کرکے آپس میں شادی کرنا چاہتے ہیں مگر نکاح رجسٹرار قانون کی خلاف رزی کررہے ہیں۔ شہریوں نے ہم جنس پرستی کی قانون سازی پر شدید غم وغصہ کا اظہار کرتے ہوئے اسے ختم کرنیکا مطالبہ کیا ہے۔

لڑکے،نکاح

مزید :

صفحہ اول -