شامی باغیوں کو سٹنگر میزائلوں کی فراہمی پر امریکی حکام سوچ میں پڑ گئے

شامی باغیوں کو سٹنگر میزائلوں کی فراہمی پر امریکی حکام سوچ میں پڑ گئے

  

واشنگٹن)خصوصی رپورٹ ( امریکی حکام اس بات پر غور کر رہے ہیںکہ کیا مختلف ممالک میں باغیوں کو زمین سے فضا تک مارکر نیوالے میزائل فراہم کئے جا سکتے ہیں یا نہیں کیونکہ ایسی صورت میں انہیں دہشتگردی کیلئے استعمال کیا جا سکے گا۔ اس حوالے سے سی آئی اے کے سابق ڈائریکٹر کا کہنا ہے کہ ایسا کرنا ایک بھیانک خواب سے کم نہیں ہو گا۔ ایک رپو رٹ کے مطابق اوباما انتظامیہ یہ میزائل شام میں باغیوں سے بھیجنے پر غور رہی ہے۔ کندھے پر رکھ کر چلانے والے ان میزائلوں کے ذریعے سے ہیلی کاپٹروں اور نیچی پروازیں کرنیوالے جہازوں کو گرایا جاسکتا ہے۔باغیوں کی سرپرستی کرنیوالے ممالک کا کہنا ہے کہ ایسے ہتھیارشام میں تین سال سے جاری خانہ جنگی کی رفتار کوتیز سکتے ہیں کہ جس میں ہونیوالی کمی کی صورتحال بشار ا لاسد کے حق میںگئی ہے۔ ماہرین ان میزائلوں کو بالکل اسی طرح کا کردار ادا کرنے سے تشبیہ دے رہے ہیں جس طرح 1980 میں افغانستان میں سٹنگر میزائلوں نے کردار ادا کیا تھا۔اوباما انتظامیہ اس حوالے سے بہت زیادہ سنجیدگی سے غور کر رہی ہے البتہ اس پہلو کو نظر انداز نہیں کیا رہا کہ ایسا کرنے میں کتنی دانشمند ی ہو گی۔

مزید :

صفحہ آخر -