بجٹ میں موبائل فون پر عائد ٹیکسز میں عوام کو ریلیف دیا جائیگا، وفاقی وزیر خزانہ کا اعلان

بجٹ میں موبائل فون پر عائد ٹیکسز میں عوام کو ریلیف دیا جائیگا، وفاقی وزیر ...

  

 اسلام آباد ( مانیٹرنگ ڈیسک 228 آن لائن 228این این آئی) وزیر خزانہ اسحاق ڈار نے اعلان کیا ہے کہ بجٹ میں موبائل فون پر عائد ٹیکسز میں عوام کو ریلیف دیا جائیگا ٗ تھری جی اور فورجی کی نیلامی کے حوالے سے اپنا وعدہ پوراکردیا ہے۔بدھ کو تھری جی اور فورجی کی نیلامی کے بعد اسحاق ڈار نے کہاکہ پی ٹی اے نے حکومتی پالیسی کے مطابق تھری جی اور فور جی کی نیلامی کا عمل کامیابی سے مکمل کیا ہے انہوں نے کہاکہ 2010میں اس وقت کی حکومت نے 50ارب روپے میں 2011میں 75ارب روپے اور 2012میں 79ارب روپے میں یہ لائسنس فروخت کر نے کا فیصلہ کیا لیکن اس پر عمل نہ کر سکی مگر جب ہم نے اپنا بجٹ پیش کیا تو ہم نے یہ لائسنس 120ارب روپے میں فروخت کر نے کا عندیہ دیا اس کے لئے ہم نے پیشہ وارانہ طورپر تخمینہ لگایا کہ اس سے قومی خزانہ کو کتنی رقم حاصل ہوسکتی ہے۔ چار تھری جی اور ایک فور جی کے لائسنس سے 111ارب روپے حاصل ہوئے ہیں جبکہ 21ارب کا ایک لائسنس ابھی باقی ہے اسی طرح 29ارب روپے کا ایک لائسنس بھی ہمارے پاس موجود ہے انہوں نے کہاکہ ہم نے اس مقصد کیلئے ایک آکشن سپر وائزری کمیٹی بنائی تھی کمیٹی میں وزارت فنانس کی طرف سے ایک خاص فوکس کیا گیا کہ ماضی میں لائسنسوں کی رقوم پندرہ سال میں وصول کی گئیں لیکن ہم اس مرتبہ 50فیصد رقم ایڈوانس لیں گے اور پچاس فیصد قسطوں میں پانچ سال میں وصول کرینگے وزیر اعظم نے اس پالیسی کی منظوری دی وزیر خزانہ نے کہاکہ ٹیلی کام انڈسٹری کا ہم پر بہت زور تھا کہ ریزرو پرائس 85ارب رکھی جائے لیکن ہم نے 130ارب روپے رکھی اور تین لائسنسوں کو چار میں تقسیم کیا اس کی وجہ یہ تھی کہ یوفون نے پندرہ میگا ہٹرز کا لائسنس لینے کی درخواست دی تھی ہم نے فور جی لائسنس کیلئے یہ بھی شرط رکھی تھی کہ پہلے تھری جی کا 10میگا ہٹرز کا لائسنس حاصل کیاجائے ۔ ایک سوال کے جواب میں اسحاق ڈار نے کہاکہ جس طرح ملک میں اکانومی کی گروتھ ہورہی ہے انشاء اللہ پاکستان بہت جلد ایک مضبوط معاشی ملک بن جائیگا اور ملینیم ڈویلپمنٹ گول حاصل ہونگے۔

مزید :

صفحہ اول -