نوازشریف اورپاکستان ایک ساتھ نہیں چل سکتے ،سرفراز نیازی

نوازشریف اورپاکستان ایک ساتھ نہیں چل سکتے ،سرفراز نیازی

لاہور(جنرل رپورٹر)پاکستان تحریک انصاف کے مرکزی رہنما سرفرازخان نیازی نے کہا ہے کہ نوازشریف اورپاکستان ایک ساتھ نہیں چل سکتے ۔ان کا فوری استعفیٰ اوراحتساب قومی بحرانوں سے نجات کاواحدراستہ ہے ۔مجرم کیخلاف دوافرادکی شہادت کافی ہوتی ہے،دوججوں نے یقیناًشواہد کی بنیادپرمیاں نوازشریف کی نااہلی کافیصلہ سنایا۔اگرمیاں نوازشریف صادق وامین ہوتے توان کاخاندان خوشحال اورقائداعظم ؒ کاپاکستان بدحال نہ ہوتا ۔

گونوازگوکانعرہ ہرگلی اورمحلے میں حکمرانوں کاتعاقب کرتارہے گا۔ قطری مکتوب مستردہونے کے بعدجے آئی ٹی بنانے کی ضرورت نہیں تھی ۔اگرحکمران خاندان کے پاس شواہد ہوتے تواب تک عدالت عظمیٰ میں پیش ہوجاتے مگرانہوں نے پاکستان کاپیسہ چوری کرکے بیرون ملک منتقل کرنے کیلئے ناجائز راستہ اختیارکیا ۔اپنے ایک بیان میں سرفرازخان نیازی نے مزید کہا کہ پاکستان میں طاقتوراورکمزور کیلئے الگ الگ قانون ہیں ،بڑے چور کوبار بار مہلت سے نظام عدل و انصاف کیلئے انتہائی مضراورمہلک ہے ۔حکمرانوں کی تلاشی کے دوران جومال ان سے برآمدہوا وہ اس کی ملکیت کے دستاویزی شواہد شوکرنے میں ناکام رہے لہٰذاء وہ سخت سزا کے مستحق ہیں۔انہوں نے کہا کہ پاکستان میں احتساب کی تحریک شروع کرنے اوروزیراعظم کواحتساب کے کٹہرے میں کھڑاکرنے کاکریڈٹ دبنگ کپتان عمران خان کوجاتا ہے ۔عمران خان کی زندگی میں کوئی حسرت باقی نہیں رہی ،انہیں اقتدار کی ضرورت نظام کی تبدیلی کیلئے ہے۔انہوں نے کہا کہ زرداری اورمیاں نوازشریف کی یاری نے پاکستان کوبربادی اوربدعنوانی کے سواکچھ نہیں دیا ۔عمران خان نے موروثی سیاست سے نجات اورکرپشن کے تابوت کوپاش پاش کرنے کیلئے علم بغاوت بلندکیا ۔ انہوں نے کہا کہ سٹیٹس کوکے حامی اس نظام اوراپنے سیاسی سومنات کوبچانے کیلئے عمران خان کیخلاف متحد ہیں ۔عمران خان کی دوسیاسی خاندانوں کیخلاف سیاسی جنگ پاکستان کے استحکام اورپاکستانیوں کے حقوق کیلئے ہے،عوام ان کاساتھ دیں۔

مزید : میٹروپولیٹن 4