المحمدیہ سٹوڈنٹس کے زیر اہتمام ’’ابھرتا سنورتا پاکستان‘‘ کے عنوان سے کنونشن

المحمدیہ سٹوڈنٹس کے زیر اہتمام ’’ابھرتا سنورتا پاکستان‘‘ کے عنوان سے ...

  



لاہور(جنرل رپورٹر)المحمدیہ سٹوڈنٹس کے زیر اہتمام ’’ابھرتا سنورتا پاکستان‘‘ کے عنوان سے دو روزہ کنونشن سے خطاب کرتے ہوئے ممتاز مذہبی رہنما پروفیسر عبدالرحمن مکی،المحمدیہ سٹوڈنٹس پاکستا ن کے مسؤل محمد راشد،فلاح انسانیت فاؤنڈیشن پاکستان کے چیئرمین حافظ عبدالرؤف،،سیف اللہ خالد،نوید قمر،انجنئیر حارث ڈار،حافظ مسعود کمال،احسان اللہ،ڈاکٹر ابو وقاص،جاوید الحسن صدیقی،نصرجاوید اور دیگر نے کہا کہ ابھرتا سنورتا پاکستان اب خواب نہیں بلکہ ایک حقیقت بن چکا ہے۔ دشمن کی سازشوں، بے پناہ مصائب اور مشکلات کے باوجود پاکستان ایک مضبوط معیشت اور ابھرتی ہوئی دفاعی طاقت ہے۔دو روزہ کنونشن میں ملک بھر سے یونیورسٹیز ،میڈیکل کالجز اور ٹیکنیکل کالجز کے طلبا شریک ہوئے۔کنونشن میں تقریری مقابلے کا اہتمام بھی کیا گیا ۔ پروفیسرحافظ عبدالرحمن مکی نے اپنے خطاب میں کہا کہ ہمارے بزرگوں نے پاکستان صرف ایک خطے کے طور پر حاصل نہیں کیا گیا تھا بلکہ یہ اسلام کا ایک مرکز تھا۔

یہی موقف قائد اعظم محمد علی جناح کا بھی تھا۔انہوں نے کہا تھا کہ پاکستان اسی دن وجود میں آگیا تھا جس دن پہلا ہندو مسلمان ہوا تھا۔قیام پاکستان کا مقصد دنیا بھر میں اسلام کو تحفظ فراہم کرنا تھا۔اقلیتوں اور بالخصوص مسلمانوں پر مظالم کے ذریعے بھارت کا چہرہ دنیا کے سامنے عیاں ہورہا ہے۔راہداری کا لفظ سب سے پہلے قائد اعظم محمد علی جناح نے استعمال کیا تھا ۔اسلام کے نام نہاد علمبرداروں نے ملک میں دہشتگردی کو فروغ دیا۔پاکستان کے خلاف بات کرنے والے اسلام کی روح سے ناواقف ہیں۔ضرورت اس امر کی ہے اسلام کی حقیقی تصویر دنیا کے سامنے پیش کی جائے۔المحمدیہ سٹوڈنٹس پاکستان کے مسؤل محمد راشد نے طلبا سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ تحریک آزادی پاکستان میں نوجوان طلبا نے کردار ادا کیا تھا۔ تعلیمی اداروں کے نوجوان ہی ہندوستان بھر میں قائد اعظم محمد علی جناح کا پیغام پہنچانے والے تھے۔آ

مزید : میٹروپولیٹن 4