ٹانک ،تحصیل کونسل ترقیاتی بجٹ سے 3کروڑ 65لاکھ روپے کی کٹوتی

ٹانک ،تحصیل کونسل ترقیاتی بجٹ سے 3کروڑ 65لاکھ روپے کی کٹوتی

  



ٹانک (نمائندہ خصوصی)تحصیل کونسل ترقیاتی بجٹ سے تین کروڑ پینسٹھ لاکھ روپے کی کٹوتی، گھوسٹ ملازمین کو بھی تنخواہوں کی ادائیگی کردی گئی ۔ڈپٹی کمشنر کی جانب سے ایڈیشنل اسسٹنٹ کمشنر کو انکوائری ٹاسک بھی صرف چائے پانی اور فوٹو سیشن تک محدود ۔تفصیلا ت کے مطابق ٹی ایم اے ٹانک میں سینکڑوں گھوسٹ ملازمین کو بلدیہ حکام کی نااہلی اور ملی بھگت کے باعث تنخواہوں کی ادائیگی کردی گئی تحصیل کونسل انیس کروڑ کے ترقیاتی بجٹ میں ٹی ایم اے ملازمین کو تنخواہوں کی مد میں تین کروڑ پینسٹھ لاکھ روپے کی کٹوتی کرکے ادائیگی کردی گئی جسمیں سینکڑوں گھوسٹ ملازمین کو بھی پانچ ماہ کی تنخواہیں ادا کی گئیں ذرائع کے مطابق تحصیل ناظم وٹی ایم او گھوسٹ ملازمین سے ماہانہ اٹھ سے دس ہزار روپے کی کٹوتی کرکے سینکڑوں ملازمین کو گھر بیٹھے تنخواہوں کی ادائیگی کررہے ہیں جسکے باعث ماہانہ ٹی ایم اے کے لاکھوں روپے کو بلدیہ حکا م ہڑپ کررہے ہیں گھوسٹ ملازمین کو تنخواہوں کی ادائیگی بارے جب انکوائری افیسر ایڈیشنل اسسٹنٹ کمشنر یوسف کریم سے رابطہ کیا گیا توانکا کہناتھا کہ ریٹارئرڈ ملازمین کو پنشن کی ادائیگی کی نگرانی کی جبکہ گھوسٹ ملازمین کی انکوائری کی فرصت نہ ملی جس کی وجہ سے گھوسٹ ملازمین کا دھندا دھندا ہی رہ گیا اور ٹی ایم اے کی سابقہ روایات کو برقرار رکھتے ہوئے گھوسٹ ملازمین کے خلاف کوئی کارروائی عمل میں نہیں لائی گئی جبکہ بلدیہ کو صرف سو ملازمین کے رحم وکر م پر چھوڑ دیا گیا جسکے باعث ضلع بھرمیں صفائی اور پانی کی صورتحال روز بروز ابتر ہوتی جارہی ہے۔

مزید : پشاورصفحہ آخر