خواجہ سراﺅں کی ضلع بدری، قومی کمیشن انسانی حقوق کا خیبر پی کے حکومت سے جواب طلب

خواجہ سراﺅں کی ضلع بدری، قومی کمیشن انسانی حقوق کا خیبر پی کے حکومت سے جواب ...
خواجہ سراﺅں کی ضلع بدری، قومی کمیشن انسانی حقوق کا خیبر پی کے حکومت سے جواب طلب

  



پشاور (آن لائن) قومی کمیشن برائے انسانی حقوق کے چیئرمین جسٹس (ر) علی نواز چوہان نے سوات پولیس کی جانب سے خواجہ سراﺅں کو ضلع بدری کے احکامات کا نوٹس لیتے ہوئے خیبر پی کے حکومت سے جواب طلب کر لیا ہے۔ چیئرمین انسانی حقوق کمیشن نے ڈی پی او سوات کو بھی نوٹس جاری کرتے ہوئے حکم دیا ہے کہ بغیرکسی وجہ کے خواجہ سراﺅں کو دو روز میں اپنے گھروں سے چلے جانے کے احکامات پر زبردستی عمل درآمد کرایا گیا تو ان افسران کے خلاف آئین اور قانون کے تحت کارروائی کی جائیگی۔

کمیشن  کے علم میں آیا ہے کہ سوات پولیس نے سوات سے تمام خواجہ سراﺅں کو دو روز میں چلے جانے کے احکامات دیئے ہیں۔ ایکٹ آف پارلیمنٹ کے تحت انسانی حقوق کمیشن  کو مینڈیٹ حاصل ہے کہ عوام کی بنیادی انسانی حقوق کو تحفظ فراہم کرے۔کوئی خواجہ سرا انفرادی طور پر کسی غیر اخلاقی سرگرمی میں ملوث ہے تو اس کے خلاف قانون کے مطابق کارروائی کی جائے۔ لیکن پوری کمیونٹی کو ہی گھر چھوڑنے کے احکامات کسی اتھارٹی کو آئین اور قانون کے تحت اجازت نہیں ہیں۔

مزید : پشاور